کوٹرنکہ ڈگری کالج کی منظوری نہ ملنے کیخلاف احتجاج

 کوٹرنکہ//کوٹرنکہ کیلئے ڈگری کالج منظورنہ ہونے کے خلاف مقامی لوگوں نے احتجاج کیا ۔تفصیلات کے مطابق کوٹرنکہ میں سیاسی وسماجی لوگوں نے مشترکہ طور بازار اور سڑک کو بند کیا اور گورنر انتظامیہ کے خلاف نعرے بازی کی۔ پی ڈی پی بلاک صدرالحاج راجامنشی،عالم دین، نیشنل کانفرنس کے بلاک صدر ایوب پہلوان ودیگران نے کہا کہ گورنر انتظامیہ کوٹرنکہ کے ساتھ ناانصافی کررہی ہے۔انہوں نے کہاکہ سابقہ حکومت نے کوٹرنکہ کیلئے کالج کے قیام کومنظوری دی تھی اوراس کی منظوری باقاعدہ طورکابینہ آرڈرکے تحت ہوئی ہے۔انہوں نے کہاکہ اگرکوٹرنکہ میں منظورشدہ کالج نہیں دیاگیاتواحتجاج کوتیزکیاجائے گا۔انہوں نے کہاکہ کوٹرنکہ ایک بہت بڑا علاقہ ہے اوریہاں کے لوگوں کامطالبہ ہے کہ یہاں پرڈگری کالج قائم کیاجائے ایک جائزمانگ ہے جسے سابقہ حکومتوں نے نظرانداز کیااورپی ڈی پی ۔بی جے پی حکومت میں اس مانگ کوپوراکیاگیاتھالیکن اب نئی فہرست جوگورنرانتظامیہ نے جاری کیاہے تواس میں کوٹرنکہ کانام غائب ہے جس کی وجہ سے علاقہ کی عوام مایوس ہوکرتشویش میں مبتلاہے۔ مظاہرین نے کہاکہ ہمیں ریاستی گورنرانتظامیہ سے اُمیدہے کہ وہ کوٹرنکہ کے نوجوانوں کواعلیٰ تعلیم کے حصول میں آرہی پریشانیوں کاازالہ کرنے کیلئے اقدامات اٹھائیں گے اورکوٹرنکہ میں ڈگری کالج قائم کرنے کااعلان کریں گے ۔واضح رہے کہ چندروزقبل نئے ڈگری کالجوں کی فہرست جاری کی گئی تھی جس میں کوٹرنکہ کونظراندازکیاگیاتھا۔مزیدتفصیلات کے مطابق کوٹرنکہ میں ڈگری کالج کا معاملہ طول پکڑتا جارہا ہے عوام میں گورنر انتظامیہ کے تئیں سخت ناراضگی مقامی ایم ایل اے چوہدری ذوالفقارعلی کی ہدایت پر سوموار کا احتجاج ٹال دیاگیا۔