کوٹان کے مکینوں کا سرپنچ و محکمہ بجلی کیخلاف احتجاج

مینڈھر //بلاک مینڈھر کی پنچایت کوٹاں کے وارڈ نمبر 9کے مکینوں نے مقامی سرپنچ اور محکمہ بجلی کے ملازمین و آفیسران کیخلاف احتجاج کرتے ہوئے الزام عائد کیا کہ پنچایت کی وارڈ نمبر 9کیلئے انتظامیہ کی جانب سے منظور شدہ بجلی ٹرانسفارمر کو آپسی ملی بھگت سے غائب کر دیا گیا ہے ۔مظاہرین نے بتایا کہ جموں وکشمیر انتظامیہ کی جانب سے شروع کردہ ’’گائوں کی اور ‘پروگرام کے دوران مقامی لوگوں کی مانگ کو مد نظر رکھتے ہوئے حکام نے وارڈ نمبر نو کیلئے ایک بجلی ٹرانسفارمر کو منظوری دی لیکن مقامی سرپنچ مبینہ طورپر محکمہ کے ملازمین کیساتھ مل کر اس منظور شدہ بجلی ٹرانسفارمرکو وارڈ نمبر 10میں لگانے کی کوششیں کررہا ہے جس کی وجہ سے مشینری کو ہی غائب کر دیا گیا ہے ۔مظاہرین نے بتایا کہ وارڈ نمبر 10میں پہلے سے ہی محکمہ کی جانب سے 2بجلی ٹرانسفارمر نصب کئے گئے ہیں لیکن اس کے باوجود بھی وارڈ نمبر 9کے مکینوں کیساتھ نا انصافیاں کی جارہی ہیں ۔انہوں نے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ بجلی ٹرانسفارمر کو وارڈ نمبر 9میں لگانے کی ہدایت جاری کی جائیں ۔مقامی سرپنچ نے بتایا کہ بجلی ٹرانسفارمر وارڈ نمبر دس کا ہی ہے تاہم محکمہ کے ملازمین و آفیسران موقعہ پر آکر خود نصب کر دیں ۔