کووڈ کرفیو ختم ہونے کے بعد مارکیٹ میں بھاری ہجوم جمع | سماجی دوری کا رجحان ختم ،صحت شعبہ نے تشویش کا اظہار کیا

پونچھ//پیر کی صبح سات بجے کرونا کرفیو ختم ہونے کے بعد منگلوار کو دوسرے روز بھی پونچھ کے بازاروں میں لوگوں کی بھیڑ ہر سو اُمنڈ پڑی اس دوران سماجی دوری کی دھجیاں اڑئی گئی اگر چہ لوگوں نے ماسک پہن رکھے تھے۔ واضح رہے کہ پیر کے روز اضافی ضلع ترقیاتی کمشنر ڈاکٹر بشارت حسین انقلابی و اے ایس پی پونچھ خالد امین نے از خود بازار کا معائنہ کر لوگوں سے اپیل کی تھی کہ وہ بلا وجہ بازاروں میںنہ آئی اورر اگر مجبوری بھی ہے تو گھر سے کوئی ایک فرد آئے تاکہ بازاروں میں رش نہ ہو لیکن اسکے باوجودبازاروں میں بھاری بھیڑ رہی۔خصوصی طور پر بینکوں کے باہر لوگ ایک دوسرے کے اوپر چھڑہے ہوئے تھے۔چیف میڈیکل افسر پونچھ نے لوگوں کی غیرسنجیدگی پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اس طرح عوام کورونا کے معاملات کو بڑھاوے کی دعوت دے رہے ہیں۔ان کا کہنا ہے کہ اگر ہم کو کورونا کے مثبت معاملات پر قابو نہ پانا ہے تو ہمیں ایس او پی کو فالو کرنے کو اولین ترجیح دی جانی چاہئے۔انہوں نے کہا کہ محکمہ کی جانب سے بار بار لوگوں کو اپیل کی گئی ہے کہ وہ اپنے گھروں میں ہی رہیں،اگر بازار یا دیگر عوامی مقامات پر جانا مضبوری ہے تو ماسک پہن کر جائیں،سماجی دوری رکھیں اور سینیٹائزر کا استعمال کریں۔انھوں نے لوگوں سے اپیل کی کہ ایس او پی پر عمل کریں تاکہ اس وبائی بیماری کو مزید پھیلنے سے روکا جاسکے۔