کشمیریونیورسٹی میں تھیٹر،موسیقی ،فوک آرٹ اور ادب پر ورکشاپ

سرینگر//ڈویژن آف یوتھ افیئرس، ڈیپارٹمنٹ آف اسٹوڈنٹس ویلفیئر کشمیر یونیورسٹی  کے اہتمام سے تھیٹر، میوزک،فوک آرٹس اور لیٹریچرپرتین روزہ  ہمہ جہت ورکشاپ کااہتمام کیا گیا،جس میںمختلف تعلیمی اداروں کے چالیس طلباء نے شرکت کی۔اس دوران متعلقہ شعبوں کے ماہرین نے طلباء کو ان کے پسندیدہ موضوعات کی جانکاری دی۔اختتامی تقریب پر ڈین اسٹوڈنٹس ویلفیئر کشمیر یونیورسٹی پروفیسرجی این خاکی نے طلباء پرزوردیاکہ وہ باضابطہ  ایسی سرگرمیوں میں زیادہ سے زیادہ حصہ لیں،تاکہ ان کی مجموعی شخصیت میں ایسے پروگراموں سے نکھار پیدا ہو۔ انہوں نے ملک کی دیگر یونیورسٹیوں کے ماہرین سے بھی درخواست کی کہ وہ اپنی کلچرل ٹیموں کوکشمیر یونیورسٹی کادورہ کرائیںتاکہ طلباء کے درمیان تمدنی روابط کو بڑھایا جائے۔کشمیر یونیورسٹی کے کلچرل آفیسر شاہد علی خان نے مہمانوں کا خیرمقدم کرتے ہوئے کہا کہ یہ ورکشاپ  اس سال نومبر میں 34ویں اے آئی یو یونیورسٹی فیسٹول کے مدنظر منعقد کیا گیا۔تین روزہ ورکشاپ میں ماہرین نے متعلقہ شعبوں میں طلباء کی رہنمائی کی۔تھیٹر شعبے میں گجرات یونیورسٹی کے جانے مانے تھیٹر اور فلم ڈائریکٹرڈاکٹر وکرم پنچال نے طلباء کوایکٹنگ اور مکالموں کی ادائیگی کے ہنرسے آگاہ کیا،جبکہ موسیقی کے شعبے میں  بانس تھالی یونیورسٹی راجستھان کے ڈاکٹر سنتوش پاٹھک نے  طلباء کومغربی موسیقی ،ہلکی موسیقی اور کلاسیکی موسیقی کے گُر سکھائے۔ گجرات یونیورسٹی کی ڈاکٹر ریکھا مکھرجی نے لٹریڑی اور مغربی موسیقی کا ورکشاپ کنڈکٹ کیااور ڈاکٹر بھوپالی کیشپ کلچرل آفیسر تیزپور یونیورسٹی آسام نے فوک آرٹس میں طلباء کی رہنمائی کی۔