کشمیراب شورش زدہ جگہ نہیں | لوگوں کا ردعمل بڑی گواہی : جموں و کشمیر چیف جسٹس

SRINAGAR, AUG 13 (UNI):- Jammu and Kashmir and Ladakh Chief justice Nongmeikapam Kotiswar Singh leading Tiranga yatra from High court to Lal Chowk, in Srinagar on Sunday. UNI PHOTO-38U

عظمیٰ نیوز سروس

سرینگر//جموں و کشمیر اور لداخ ہائی کورٹ کے چیف جسٹس، جنہوں نے اتوار کو سرینگر کے مشہور گھنٹہ گھر کے قریب لال چوک میں ترنگا ریلی میں حصہ لیا، کہا کہ ریلی میں لوگوں کا ردعمل ظاہر کرتا ہے کہ کشمیر معمول پر آ گیا ہے۔

ریلی کے موقع پر نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے چیف جسٹس این کوٹیشور سنگھ نے کہا کہ یہاں کے لوگوں کا ردعمل ظاہر کرتا ہے کہ کشمیر معمول پر آ گیا ہے اور یہ جگہ بہترین کی مستحق ہے۔انہوں نے کہا کہ کشمیر ایک خوبصورت جگہ ہے، یہاں کے لوگ بہت دلکش ہیں اور “ہم نے دیکھا ہے کہ سیاحوں کی تعداد میں اضافہ ہوا ہے اور دہائیوں سے سب سے زیادہ ہے، جس سے ظاہر ہوتا ہے کہ لوگ اس جگہ کو دیکھنا چاہتے ہیں”۔انہوں نے کہا ’’میں محسوس کرتا ہوں کہ جموں و کشمیر میں امن قائم ہے، اور یہاں اس قسم کی سرگرمیاں اس جگہ کے بہتر مستقبل کا اشارہ ہے”۔چیف جسٹس نے مزید کہا کہ کشمیر کو اب ایک شورش زدہ جگہ کے طور پر نہیں دیکھا جا سکتا اور اس جگہ مزید استحکام اور ترقی آئے گی۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ وہ ترنگا ریلی میں شرکت کرنے اور یہاں یوم آزادی کی تقریبات کا حصہ بن کر فخر محسوس کرتے ہیں۔