کشتواڑ میں احتجاج ، ڈاکٹرں پر فرائض منصبی سے کوتاہی برتنے کا الزام

کشتواڑ//ضلع ہسپتال میں تعینات ڈاکٹروں کے رویہ اور انکی جانب سے اپنے فرائض انجام دینے میں مبینہ کو تاہی کے خلاف ناراضگی کا اظہار کرنے کےلئے پیر کے روز ضلع کے عوام نے چیف میڈیکل افسر کشتواڑ کے دفتر کے باہر احتجاجی مظاہرہ کیا۔بعد ازاں ، مظاہرین نے ضلع ہسپتال کے باہر بھی دھرنا دیا اور قصور وار ڈاکٹروں کے خلاف سخت کاروائی کو مطالبہ کیا۔مظاہرین کا الزام ہے کہ ضلع ہسپتال میں کئی ڈاکٹر اکثر گیارہ بجے ڈیوٹیوں پر آتے ہیں۔انہوں نے الزام لگایا کہ ڈاکٹر ضلع ہسپتال میں مریضوں کو دیکھنے کے بجائے اپنے پرائیویٹ کلینکوں میں مصروف رہتے ہیں۔مظاہرین نے کہا کہ اگرچہ این ایچ آر ایم ملازمین اپنے مطالبات کو لیکر ہڑتال پر ہیں لیکن بد قسمتی سے باقاعدہ طور تعینات ڈاکٹر صاحبان اپنے فرائض ایمانداری ور نیک نیتی سے انجام نہیں دیتے ہیں اور غریب عوام کے ساتھ کھلواڑ کرتے ہیں۔مظاہرین نے گورنر اور ضلع ترقیاتی کمشنر سے اس سلسلہ میں مداخلت کرنے کی اپیل کی ہے ،تاکہ غریب عوام کے مشکلات کا ازالہ ہو سکے۔انہوں نے متنبہ کیا کہ اگر انکا مسلہ د و،تین دنوں کے دوران حل نہیں کیا گیا تو وہ سڑکوں پر آکر احتجاج کریں گے۔