کسانوں کو پودوں کی فراہمی،محکمانہ نرسریاں قائم کرنے کی ہدایت

جموں//باغبانی کے وزیر سید بشارت احمد بخاری نے محکمہ کو ہدایت دی کہ معیاری پلانٹنگ مواد میں خود انحصاری حاصل کرنے اور ریاست میں پروسسنگ ، پریزرویشن انٹرپرائزز کو ترقی دینے کے فوری اقدامات کریں۔ان باتوںکا اظہار وزیر موصوف نے دونوں صوبوں کے محکمہ باغبانی کی کارکردگی کا جائزہ لینے کے سلسلے میں منعقدہ افسروں کی ایک میٹنگ کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ اس موقعہ پر ہارٹیکلچر ، پلاننگ اور مارکیٹنگ محکمہ کی کارکردگی کا بھی جائزہ لیاگیا۔وائس چیئرپرسن سٹیٹ ہارٹیکلچر ڈیولپمنٹ بورڈ عبدالسلام ریشی ، سیکرٹری ہارٹیکلچر منظور احمد لون، ڈائریکٹر ہارٹیکلچر جموں انورادھا گپتا ، ڈائریکٹر ہارٹیکلچر کشمیر محمد حسین میر ، ڈائریکٹر ہارٹیکلچر پلاننگ و مارکیٹنگ منظور احمد قادری، ڈائریکٹر فائنانس ہارٹیکلچر پی ایس رکوال ، ڈائریکٹر لا ٔ انفورسٹمنٹ سوشیل ساہنی ، جوائنٹ ڈائریکٹر ہارٹیکلچر جموں و دیگر افسران نے میٹنگ میں شرکت کی۔جموں اور کشمیر صوبوں کے متعلقہ محکموں کی کارکردگی کا جائزہ لیتے ہوئے وزیر نے کہا کہ ان محکموں کو وجود میں آنے کا مقصد کسانوں کو تکنیکی سہولیات ، مشینری ، مارکیٹنگ و سہولیات فراہم کرنا ہے ۔انہوںنے کہا کہ حکومت گروورس کے مفاد کا تحفظ دینے کے لئے تمام تر اقدامات کر رہی ہے ۔انہوںنے کسانوں کو میوئوں کے پودے فراہم کرنے کے لئے محکمانہ نرسریوں کو قائم کرنے کی ہدایت دی ۔ ان میوئوں میں اخروٹ ،سٹرس ، لیچی وغیرہ شامل ہے ۔میٹنگ میں فیصلہ لیا گیا کہ ریاست کے گروورس کو باغبانی سے متعلق جانکاری فراہم کرنے کے لئے ایک کانفرنس کا انعقاد کیا جائے گا۔