کرناہ سیکٹر میں تیسرے روز بھی آپریشن

کپوارہ//سرحدی ضلع کپوارہ کے کر ناہ سیکٹر میں پیر کو تیسرے روز بھی مفرور جنگجو ئوںکے خلاف آپریشن جاری رہا اور اس دوران تصادم آرائی میں مزید 2جنگجو جاں بحق ہونے کا فوج نے دعویٰ کیا ہے۔ اس طرح گزشتہ تین روز میں فوج اور جنگجوئو ں کے درمیان مسلح تصادم میں جا ں بحق ہونے والے جنگجوئو ں کی تعداد 5 تک پہنچ گئی جبکہ دو روز قبل زخمی فوجی اہلکاراسپتال میں د م توڑ بیٹھا ۔ ہفتہ کو کرناہ سیکٹر کے شمس بری پہاڑ پر ایگل پوسٹ کے متصل تعینات 20جاٹ اور4پیرا فوجی اہلکارو ں نے جنگجوئو ں کے ایک مسلح گروپ اس پار داخل ہوتے دیکھا۔فوج نے علاقہ کو فوری طور گھیرے میں لیکر جنگجوکے فرار ہونے والے راستو ں پر ناکے لگائے اور فوج کی مزید کمک طلب کر کے تلاشی کارروائی شروع کی ۔ہفتہ کو 4پیرا کا ایک فوجی اہلکار لانس نائیک سندیپ سنگھ زخمی ہوگیا ،جو پیر کو زخموں کی تاب نہ لاکر دم تو ڑ بیٹھا ۔اس جھڑپ میں اتوار کی شام فوج نے 3جنگجوئو ں کو جا ں بحق کرنے کا دعویٰ کیا تھا اور انہیں خدشہ تھا کہ علاقہ میں مزید جنگجو چھپے بیٹھے ہیں ۔اتوار کی شام دیر گئے فوج اور جنگجوئو ں کے درمیان گولیو ں کاتبادلہ جاری رہا اور 20جا ٹ کا فوجی اہلکار سپاہی سنیل زخمی ہوا ۔فوجی ذرائع کا کہنا تھا کہ علاقہ میں جو جنگجو چھپے بیٹھے ہیں وہ فوج پر رک رک کر فائرنگ کر رہے ہیں اور رات کو جنگجو مخالف کارروائی معطل کی گئی۔پیر کی علی الصبح فوج نے دو بارہ جنگجوئو ں کی تلاش شروع کی اور دوپہرکے قریب طرفین کے درمیان  دوبارہ جھڑپ شروع ہوئی جس میں مزید 2جنگجو جا ں بحق ہونے کا فوج نے دعویٰ کیا ہے ۔ فوج کو خدشہ ہے علاقہ میںمزید چند ایک جنگجو چھپے بیٹھے ہیں جن کی تلا ش کے لئے ڈرون کیمروں کا استعمال کیا گیا ہے جبکہ علاقہ میں فوجی ہیلی کاپٹر کا گشت بھی دیکھا گیا ۔ علاقہ میں فوجی آپریشن جاری تھا ۔