کانگریس کی ضمانت اقتصادی اور سماجی تحفظ کی ڈھال :کھڑگے

یواین آئی

نئی دہلی//کانگریس کے صدر ملکارجن کھڑگے نے کہا ہے کہ کانگریس نے اپنے منشور میں جو 5 انصاف اور 25 ضمانت ملک کے شہریوں کو دینے کی بات کی ہے، اس میں سب کے لیے سماجی اور اقتصادی تحفظ کی مضبوط ڈھال ہے ۔کھڑگے نے ایک بیان میں کہا کہ کانگریس کا 5 انصاف اور 25 ضمانتوں کا ایجنڈا ہندوستان کے ہر شہری کو اقتصادی اور سماجی تحفظ کی مضبوط ڈھال فراہم کرتا ہے۔انہوں نے کہا، “کانگریس نے وعدہ کیا ہے کہ آنے والی حکومت 30 لاکھ سرکاری آسامیاں بھر کر نہ صرف نوجوانوں کے مستقبل کو محفوظ بنائے گی بلکہ ایک دہائی سے زیر التواء ایس سی، ایس ٹی، او بی سی، ای ڈبلیو ایس کے ریزرو عہدوں کو بھی پْر کرے گی اورنوجوانوں کی حب الوطنی پر سوال اٹھانے والی اگنی ویر یوجنا کو بھی بند کرے گی۔کھڑگے نے کہا، ’’مہالکشمی گارنٹی کے تحت غریب خواتین کے کھاتوں میں 8500 روپے ماہانہ براہ راست منتقل کیے جائیں گے تاکہ وہ بڑھتی ہوئی مہنگائی سے لڑ سکیں اور کچھ رقم بچا کر مالی طور پر خود کفیل بن سکیں۔ اب 25 لاکھ روپے کا مفت علاج کسی بھی عورت کو اپنے زیورات گروی رکھنے پر مجبور نہیں کرے گا۔کسانوں کی آمدنی بڑھانے کے لیے، ایم ایس پی کی قانونی ضمانت، ان پٹ پر جی ایس ٹی کو ہٹانا اور مستحکم درآمدی برآمدی پالیسی ایک دور رس قدم ثابت ہوگا۔ مزدوروں کے لیے کم از کم اعزازیہ 400 روپے یومیہ، فوڈ سیکیورٹی ایکٹ میں اناج کو 5 کلو سے 10 کلوگرام تک دگنا کرنا، شہری روزگار گارنٹی اور غیر منظم شعبے کے کارکنوں کا سماجی تحفظ ایک تبدیلی کا قدم ہوگا۔ ذات پات کی مردم شماری کو ضروری قرار دیتے ہوئے، انہوں نے کہا، ذات پات کی مردم شماری سے گنتی، پانی جنگل زمین کی قانونی تحفظ کی گارنٹی، چھوٹی جنگلاتی پیداوار پرایم ایس پی کی ضمانت – حصہ داری انصاف سے برابری کا ایک نیا باب شروع ہوگا۔ کانگریس کو ملک کے لوگوں کا ملا ہے بھرپور ساتھ، کیونکہ ہاتھ بدلے گا حالات۔”