ڈگری کالج منڈی میں تدریسی عمل شروع

منڈی//سرحدی ضلع پونچھ کے منڈی علا قہ میں ڈگری کالج میں تدریسی عمل شروع کر دیا گیا ہے جس کی وجہ سے طلباء میں خوشی کی لہر دوڑ گئی ہے جبکہ والدین نے انتظامیہ کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہاکہ اس عمل سے پسماندہ علا قوں کے بچوں کو اعلیٰ تعلیم حاصل کر نے میں مدد ملی گی ۔یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ ریاستی انتظامیہ نے چند ماہ قبل ریاست کے مختلف علاقوں میں ڈگری کالجز کھولنے کے احکامات صادر کئے تھے جس کے تحت پونچھ کی تحصیل منڈی کے لئے بھی ڈگری کالج کے قیام کو منظوری ملی تھی۔ اگر چہ ابھی تک کالج کی عمارت تعمیر نہیں کی جاسکی ہے البتہ حکام نے منڈی کے علاقہ راجپورہ میںایک سرکاری عمارت میں کالج کادرس و تدریس کا عمل شروع کر دیا ہے جس کی وجہ سے تحصیل منڈی کے طلباء و طالبات میں خوشی کی لہر دوڑ گئی ہے ۔واضح رہے کہ تحصیل منڈی میں ڈگری کالج نہ ہونے کی وجہ سے تحصیل کے طلباء کو میل سفر طے کر کے اپنی اعلی تعلیم حاصل کرنے کے لئے گور نمنٹ ڈگری کالج پونچھ جانا پڑتا تھا جس کے سبب غریب طبقہ کے طلباء کو کافی پریشانی کا سامنا کرنا پڑتا تھا۔ان میں کئی ایک طلباء غربت کی وجہ سے اپنی اعلیٰ تعلیم جاری نہیں رکھ سکتے تھے ۔گورنر راج سے قبل پی ڈی پی اور بی جے پی حکومت نے ریاست کے مختلف علاقوں میں ڈگری کالجوں کا قیام عمل میں لایا جس میں تحصیل منڈی میں بھی ڈگری کالج کو قائم کیا گیا تھا۔ڈگری کالج منڈی کے پرنسپل پروفیسر اورنگ زیب نے کہاکہ 22جولائی سے کالج میں تدریسی عمل کو شروع کر دیاگیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ابھی تک کالج میں 72کے قریب طلباء و طالبات نے داخلہ لیا ہے اور ان کو مختلف مضامین میں داخلے دے کر تدریس کا عمل شروع کر دیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ کالج میں تمام تر سہولیات نہ ہونے کی وجہ سے ابھی صرف فنون شعبہ میں ہی داخلا دیا جائے گا اور اس سلسلہ میں مضامین کے اساتذہ کی تعیناتی بھی عمل میں لائی گئی ہے ۔پہلے سمسٹر کی اقرانامی ایک طلبہ نے بتایا کہ ڈگری کالج منڈی میں تدریسی عمل کا شروع ہو نا خوش آئند ہے ۔انہوں نے کہاکہ تحصیل منڈی کے دیہی علا قوں کے طلباء اس سے قبل پونچھ جا کر تعلیم حاصل کر رہے تھے جو کہ ایک مشکل عمل تھا ۔تدریسی عمل شروع ہو نے کے سلسلہ میں والدین نے ریاستی انتظامیہ کا شکریہ بھی ادا کیا ہے ۔