ڈگدول سڑک حادثہ

بانہال // ضلع رام بن میں ڈگڈول کے مقام جمعہ کے روز پیش آئے سڑک حادثے میں لقمہ اجل بنے پانچ افراد کی رحلت پر کئی لوگوں اور انجمنوں نے اپنے رنج و غم کا اظہار کیا ہے اور مہلوکین کے افراد خانہ سے اپنی تعزیت پرسی کی ہے۔جمعیت اہلحدیث کے ضلع صدر رام بن  ماسٹر عبدالرحمان بالی نے کشمیر عظمیٰ کو بھیجے گئے ایک تحریری بیان میں کہا ہے کہ ڈگڈول کے سڑک حادثے نے کئی ہمدرد ہم سے چھین لئے ہیں اور کئی گھروں کے چشم وچراغ اس دردناک حادثے میں ہلاک ہوئے ہیں۔انہوں نے اس حادثے میں لقمہ اجل بنے محمد ایوب رونیال ساکنہ مالیگام پوگل کی رحلت پر اپنے رنج و غم کا اظہار کیا ہے اور لواحقین کے ساتھ اپنی ہمدردی اور تعزیت کا اظہار کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس المناک سانحہ کا شکار بننے والی گاڑی میںدارالحدیث رام بن کے ْ مدرس منیراحمد نائیک سلفی کے خاندان کے کئی افراد بھی سوار تھے جن میں ان کے چچااور بھابھی موقعے پر ہی دم توڑ بیٹھے جب کہ ان کی شدید زخمی بیٹی ابھی جموں کے ہسپتال میں زیر علاج ہے۔ بیان کے مطابق ضلع جمعیت اہلحدیث رام بن لواحقین کے غم میں برابر کی شریک ہے اور ساتھ ہی ساتھ صبرکی تلقین بھی کرتی ہے کیونکہ صبر کرنے والوں کیلئے اللہ رب العالمین کے پاس بے حساب اجر ہے۔ صدر جمعیت ضلع رام بن ماسٹر عبدالرحمان بالی نے مزید کہا کہ اس سانحہ پر ایک ذمہ دار کے طور پر میں اپنے تمام تحصیل صدور اورحلقہ صدور و اراکین جمعیت اہلحدیث ضلع رام بن کی طرف سے متاثرین کے ساتھ اظہار ہمدردی کرتا ہوں اور اللہ سے دعا کرتا ہوں کہ جو اہل ایمان اس حادثے میں وفات پا گئے ان کو کروٹ کروٹ جنت نصیب کرے اور زخمیوں کو شفاء کاملہ و عاجلہ عطا کرے اور تمام لواحقین کیلئے یہ غم ہلکا کر دے۔اس حادثے میں محکمہ صحت میں فارماسسٹ کے طور پرائمری ہیلتھ سینٹر نوگام پوگل پرستان میں تعینات محمدایوب رونیال کی رحلت پر محکمہ صحت کے میڈیکل سٹاف نے اکڑال اور بانہال میں الگ الگ تعزیتی نشستوں کا
اہتمام کیا ہے جس میں تمام ملازموں اور ڈاکٹروں نے شرکت کی اور اپنے ساتھی کی رحلت پر اپنے رنج وغم کا اظہارکیا۔ اس موقع پر مہلوک کے ایصال ثواب کیلئے دعا کی گئی۔ میڈیکل ایمپلائز فیڈریشن ضلع رام بن کے صدر محمد اختر ملک نے محکمہ صحت کے اپنے ساتھ ملازم عبدالقیوم رونیال کی رحلت پر اپنے تعزیتی پیغام میں کہا کہ مرحوم محکمے کا ایک ہونہار ، قابل اور ایماندار ملازم تھا اور اس کی اچانک رحلت نے تمام محکمے کو غم زدہ کردیا ہے۔انہوں نے مرحوم کے کنبے سے اپنی اور اپنی انجمن کی طرف سے تعزیت پیش کی ہے اور کہاوہ دکھ کی اس گھڑی میں غمزدہ کنبے کے ساتھ ہے۔ انہوں نے محکمہ صحت کے حکام سے اپیل کی ہے کہ وہ مرحوم کے حق میں خصوصی معاوضہ ادا کرے اور گھر کے ایک فرد کو روزگار دینے کیلئے اقدامات کریں۔ انہوںنے اس حادثے میں مرنے والے سماجی کارکن اور دکاندار سریش کمار مکرکوٹ والے کی ہلاکت پر بھی اپنی تعزیت کااظہار کیا ہے اور تمام لواحقین کو یہ صدمہ برداشت کرنے کی دعا کی گئی ہے۔ انہوں نے ان کے بڑے بھائی اور مقامی امن کمیٹی کے اہم رکن دیسراج سے ابھی تعزیت کا اظہار کیا ہے۔کشمیر عظمیٰ کے بیورو چیف برائے وادی چناب اور صحافی محمد تسکین وانی نے بھی سریش کمار کی رحلت پر اپنے رنج کا اظہار کرتے ہوئے مہلوک کے کنبے کے ساتھ اپنی ہمدردی اور تعزیت کا اظہار کیا ہے۔ مرحوم سریش کمار شاہراہ پر واقع مکرکوٹ میں روزنامہ کشمیرعظمیٰ اور گریٹر کشمیر کی نیوز ایجنسی بھی چلاتے تھے اور علاقے کے سماجی کاموں میں پیش پیش رہنے و الے انسان تھے۔ انہوں نے ان کے بڑے بھائی اور سابقہ سرپنچ اور سماجی کارکن ٹھاکر دیسراج سے اپنی تعزیت کا اظہار کیا ہے۔سماجی کارکن نیل تحصیل رامسو زوالفقار نائیک نے علاقہ کے پانچ قیمتی جانوں کے زیاں پر اپنے دکھ کا اظہار کیا ہے۔انہوں نے نیل کے مہلوکین کے کنبے سے اپنی تعزیت کا اظہار کیا ہے اور مرحومین کیلئے جنت نشینی کی دعا کی ہے۔