ڈورو ویری ناگ میں بدترین ٹریفک جام | 4سالہ بچہ اسپتال پہنچنے سے قبل ہی فوت، لوگوں کا احتجاج

اننت ناگ // ڈورو شاہ آباد میں ایک 4سالہ بچہ بد ترین ٹریفک جام کے باعث اسپتال پہنچنے سے قبل ہی فوت ہوگیا۔ اتوار کی سہ پہر نوپورہ ڈورو میں 4 سالہ انظر احمد ولد جان محمد بٹ نامی معصوم بچے نے گھر میں کوئی شئے نگل لی جو اُس کے گلے میںاٹک گئی۔ اگر چہ بچے کو فوری طور پر ڈورو اسپتال پہنچانے کی کوشش کی گئی تاہم بدترین ٹریفک جام کے باعث بچہ اسپتال پہنچنے سے قبل ہی فوت ہوگیا ۔ بچہ کے قریبی رشتہ دار راجہ نثار نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ بچہ گھر کے صحن میں کھیل رہا تھا جس دوران اُس نے کوئی شئے نگل لی جس کے باعث اُس کی سانسیںپھولنے لگیں۔ اگر چہ بچے کو اسپتال پہنچانے کی کوشش کی گئی لیکن بدترین ٹریفک جام کے باعث وہ راستے میں ہی دم توڑ بیٹھا   ۔ ایس ایچ اونذیر اندرابی نے معاملے کے حوالے سے کہا کہ اُنہوں نے واقع کے حوالے سے سنا ہے تاہم فی الحال مہلوک کے کنبے نے پولیس اسٹیشن میں تحریری شکایت درج نہیں کی ہے ۔ضلع ترقیاتی کمشنر نے واقع کے حوالے سے تحقیقات کی یقین دہانی کی ہے۔قابل ذکر ہے کہ محکمہ ٹریفک اننت ناگ ڈورو ویری ناگ سڑک پر مال بردار گاڑیوں کو قابو کرنے میں مسلسل ناکام ثابت ہورہا ہے ۔علاقہ میں ہر روز گھنٹوں ٹریفک جام رہتا ہے اور سینکڑوں چھوٹی بڑی گاڑیاں درماندہ ہوکر رہ جاتی ہے ۔اتوار کے روز قصبہ میں بدترین ٹریفک جام رہا جس کے باعث اس سڑک پر سفر کرنے والے افراد بالخصوص مریضوں کو سخت ذہنی کوفت کا سامنا کرنا پڑا  ۔ مقامی اوقاف صدر جاوید احمد خان نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ ADVسڑک پر ٹریفک جام لگنا معمول بن چکا ہے۔اگر چہ کئی بار معاملہ انتظامیہ کی نوٹس میں لایا گیا تاہم سوائے یقین دہانی کے کچھ بھی نہیںہوا  ۔اُنہوں نے کہا کہ کھنہ بل اور میر بازار سے جان بوجھ کر گاڑیوں کا رخ اننت ناگ ویری ناگ سڑک کی جانب موڈا جاتا ہے تاکہ ٹیکس حاصل کرنے والے افراد کو فائیدہ پہنچ سکے۔اُنہوں نے کہا کہ اگر انتظامیہ نے دو روز کے اندر اندر مال بر دار گاڑیوں کی آوا جاہی پر روک نہ لگائی تو وہ سڑکوں پر آکر احتجاج کرنے کیلئے مجبور ہوجائیں گے۔ یہ بات قابل ذکر ہے کہ گذشتہ روز ضلع ترقیاتی کمشنر اننت ناگ کے کے سدا نے ڈورو میں عوامی دربار میں علاقہ سے مال بردار گاڑیوں کی آوا جاہی پر مکمل پابندی عائد کرنے کا اعلان کیا تھا تاہم حکم نامہ کا اطلاق زمینی سطح پر ابھی ہونا باقی ہے ۔