چوکی بل سے کپوارہ تک غیر قانونی پانی کے کنکشن | متعدد علاقوں میں سپلائی متاثر ،محکمہ کی جانب سے کارروائی

اشرف چراغ
کپوارہ//شمالی ضلع کپوارہ میں زون ریشی واٹر سپلائی سکیم جس سے چوکی بل سے لیکر کپوارہ تک درجنو ں دیہات کو پینے کا صاف پانی فراہم کیا جاتا ہے جگہ جگہ لوگو ں نے غیر قانونی کنکشن اٹھائے ہیں جس کی وجہ سے چوکی بل سے لیکر کپوارہ تک متعدد علاقوں میں پینے کے پانی کی سپلائی متاثر ہوتی ہے ۔ا س دوران ایگزیکیٹو انجینئر محکمہ جل شکتی کپوارہ ڈویژن نے کہا کہ محکمہ نے ایک ٹاسک فورس ٹیم تشکیل دی ہے جو پائپ لائن کو معائنہ کریں گے اور جس کسی نے بھی چوکی بل کپوارہ واٹر سپلائی سکیم کی مین پائپ سے کنکشن اٹھایا ہو اس کے خلاف کاروائی عمل میں لائی جائے گی ۔محکمہ جل شکتی نے درنگیاری چوکی بل واٹر سپلائی سکیم کے ذریعے ضلع کے متعدد علاقوں کو پینے کا صاف پانی فراہم کیا اور کئی سال تک اس سکیم کے ذریعے لوگو ں کو بلا خلل پینے کا پانی فراہم کیا جاتا تھا تاہم امسال گرمیوں کے ساتھ ہی ضلع کے متعدد علاقوں میں پینے کے پانی کی شدید قلت پیدا ہوگئی ہے اور چند روز قبل گلگام ،باتر گام اور دیگر مقامات پر لوگو ں نے احتجاج بھی درج کیا اور الزام لگایا کہ چوکی بل سے لیکر کپواری تک جو مین پائپ سپلائی آتی ہے لوگو ں نے جگہ جگہ سوراخ کئے ہیں اور اس پانی کو بطور اپنے زمین کو آبپاشی کے طور استعمال کرتے ہیں جس کے نتیجے میں پانی کی سپلائی بری طر ح متا ثر ہوتی ہے اور نتیجے کے طور لوگ پانی کی ایک ایک بوند کے لئے ترس رہے ہیں ۔جن علاقوں میں پانی کی سپلائی متا ثر ہوتی ہے ان علاقوں کے لوگو ں نے معاملہ ایگزیکٹیو انجینئر کپوارہ ڈویژن کی نوٹس میں لایا اور انہو ں نے لوگو ں کو یقین دلایا کہ غیر قانونی طور مین سپلائی پائپ سے کنکشن اور سوراخ کرنے والو ں کے خلاف سخت کاروائی عمل میں لائی جائے گی ۔ایگزیکٹیوانجینئر محکمہ جل شکتی کپوارہ ڈویژن رجندر کمار شرما نے کشمیر عظمیٰ کو بتا یا کہ انہو ں نے ایک ٹاسک فورس ٹیم تشکیل دی جو چوکی بل سے لیکر کپوارہ تک پانی سپلائی کرنے والی مین پائپ کا معائنہ کریں گے اور جہا ں جہا ں پائپ کو نقصان پہنچایا گیا اور اس کی وجہ سے پینے کے پانی کی سپلائی متاثر ہوتی ہے ان کے خلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے گی ۔انہو ں نے کہا کہ پینے کا پانی فراہم کرنا محکمہ کی ذمہ داری ہے اور گرمیوں کی وجہ سے پانی کے جو ذخائر ہیں ان کے پانی میں کمی آئی ہے تاہم محکمہ کے فیلڈ عملہ کو متحرک کیا گیا تاکہ جن علاقوں میں پانی کی قلت پیدا ہوگئی ہے انہیں بھی پانی فراہم کرنے کے کئے انتظام کیا جائے گا ۔رجندر کمار شرما نے لوگو ں کو خبر دار کیا کہ وہ چوکی بل کپوارہ واٹر سپلائی سکیم سے غیر قانونی کنکشن اور سوراخ کرنے سے بعض آئے ۔انہو ں نے کہا کہ اب تک تین لوگ غیر قانونی طور کنکشن اٹھانے کی زد میں آگئے ہیں اور ان کے خلاف با ضابطہ طور ایف آئی آر دیا گیا اور مزید لوگو ں کے خلاف بھی کارروائی کی جائے گی ۔