پی ڈی ڈی ڈیلی ویجروں کی مستقلی خوش آئند

 سرینگر// نیشنل کانفرنس نے    کے عارضی ملازمین کو مستقبل کرنے کے اقدام کا خیرمقدم کرتے ہوئے اس بات کا مطالبہ کیا ہے کہ دوسرے محکموں میں سالہاسال سے انتظار کررہے عارضی ملازمین کی مستقلی بھی بنا وقت ضائع کئے بغیر عمل میں لائی جائے۔ پارٹی کے معاون صوبائی ترجمان مدثر شاہمیری نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ اس قدم نے ایسے ہزاروں دیگر عارضی ملازمین کی امیدیں بڑھا دی ہیں، جن کے مصائب اور مشکلات عرصے سے ختم ہونے کا نام نہیں لے رہے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ پی ڈی ڈی کے عارضی ملازمین کی مستقلی واقعی ایک خوش آئند قدم ہے۔ ہماری پارٹی کے ممبران پارلیمنٹ نے اس معاملے میں دل و جان سے کام کیا، اسے پارلیمنٹ میں اٹھایا اور متعلقہ وزارت کے ساتھ بھی اس بارے میں میٹنگیں کیں۔ انہوں نے کہاکہ نیشنل کانفرنس کے رکن پارلیمان جسٹس (ر) حسنین مسعودی نے عارضی ملازمین کی مستقلی کے سلسلے میں وزیر خزانہ شری نرملا سیتا رمن کیساتھ بھی ایک تفصیلی میٹنگ کی اور انہیں عارضی ملازمین کے بارے میں مکمل تفصیلات فراہم کیں۔ انہوں نے کہاکہ اگر چہ رکن پارلیمان نے تمام 60ہزار ملازمین کی مستقلی کا مطالبہ کیا تھا لیکن حکومت نے صرف پی ڈی ڈی کے عارضی ملازمین کو ہی مستقل کرنے کا فیصلہ لیا ہے ۔ شاہمیری نے کہا کہ یہ عارضی ملازمین کئی دہائیوں سے مل کر اپنی خدمات انجام دے رہے ہیں اور لگن اور عزم کے ساتھ لوگوں کی خدمت کر رہے ہیں۔ایسے ملازمین میں سے زیادہ تر اپنے کنبوں کے واحد کمانے والے ہیں۔ حکومت معاشرے کے اس حقیقی استحصال زدہ طبقے کو سماجی اور معاشی انصاف فراہم کرنے کی ذمہ داری سے غافل نہیں رہ سکتی۔انہوں نے کہاکہ ریگولرائزیشن میں تاخیر کی وجہ سے یہ ملازمین پے سکیل، گریڈ پے، ایچ آر اے، ایجوکیشن الاؤنس وغیرہ سے محروم ہو جاتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ جس طرح سے پی ڈی پی کے عارضی ملازمین کو مستقل کیا گیا اُسی طرح بغیر لیت و لعل دیگر محکموں میں کام کررہے عارضی ملازمین کی مستقلی بھی فوری طور پر عمل میں لائی جائے۔