پیگاسس ، کسان تحریک اور بڑھتی ہوئی مہنگائی پر اپوزیشن کا ہنگامہ

نئی دہلی ،//لوک سبھا میں پیگاسس جاسوسی معاملہ ، کسانوں کے مسئلے اور بڑھتی ہوئی مہنگائی کے معاملے پر اپوزیشن ارکین مسلسل 12 ویں دن ہنگامہ کرتے رہے ، جس کی وجہ سے ایوان کو دن بھر کے لیے ملتوی کر دیا گیا۔ اپوزیشن کے زبردست ہنگامے کے سبب لوک سبھا میں بدھ کو مانسون اجلاس کے بارویں ویں دن وقفہ سوال متاثر رہا اور ایوان کی کارروائی دوپہر دو بجے تک کے لئے ملتوی کرنی پڑی۔ وقفہ سوال کے دوران دو بار التوا کے بعد دوپہر باراہ بجے ایوان کی کارروائی تیسری بار جیسے ہی شروع ہوئی، کانگریس، ترتمول کانگریس، دراوڑ منیتر کڑگم (ڈی ایم کے) اور شرومنی اکالی دل سمیت مختلف اپوزیشن پارٹیوں کے ارکان ہنگامہ کرتے ہوئے اسپیکر کی نشست تک پہنچ گئے۔ ارکان کے ہاتھوں میں کسانوں کے معاملے، پیگاسیس جاسوسی اور مہنگائی سے متعلق مختلف طرح نعروں والی تختیاں تھیں۔پریزائیڈنگ آفیسر راجندر اگروال نے ہنگامے کے دوران ہی اہم دستاویز ایوان کی میز پر رکھے۔  اس سے قبل اپوزیشن کے وقفہ سوال کو بھی متاثر کیا تھا اور ایوان کی کارروائی دو بار ملتوی کرنی پڑی۔ ادھر راجیہ سبھا میں ہنگامے پر کارروائی کرتے ہوئے ترنمول کانگریس کے چھ اراکین پارلیمنٹ کو ایک دن کے لئے معطل کر دیا گیا ہے۔ راجیہ سبھا میں اپوزیشن جماعتوں کے ارکان نے پیگاسس جاسوسی کیس، کسانوں کے مسائل اور مہنگائی پر راجیہ سبھا میں شور و غل اور ہنگامہ کیا، جس کی وجہ سے ایوان کو دوپہر دو بجے تک ملتوی کر دیا گیا۔