پٹن میں محکمہ صحت کے خلاف احتجاج

 بارہمولہ //شمالی قصبہ پٹن میں ٹراما اسپتال چالو نہ کرنے کے خلاف لوگوں نے سنیچر کواحتجاج کیا ۔ احتجاج میں شامل لوگوں نے کہا کہ پٹن میں ایک ٹراما ہسپتال 15سال میں تعمیر کیا گیا لیکن اب کام کاج شروع نہیں ہورہا ہے ۔ انہوںنے کہا کہ سابق وزیر علیٰ محبوبہ مفتی نے ہسپتال کوفوری طور چالو کرنے کی ہدایت جاری کی تھی لیکن تاایں دم اس ہسپتال میں کام کاج شروع نہیں ہورہا ہے ۔مظاہرین میں شامل مشتاق احمدنامی ایک نوجوان نے بتایا کہ آئے روز سڑک حادثات میں یہاں لوگ زخمی ہوتے ہیں جن میں سے اکثرزخمیوں کو سرینگرمنتقل کرنا پڑتا ہے بلکہ کبھی کبھار کچھ راستے میں ہی دم توڑ دیتے ہیں ۔ مظاہرین کے مطابق ٹراما اسپتال میں کام کاج شروع ہونے سے شمالی کشمیر کے لوگوں کیلئے بڑی آسائش پیدا ہوسکتی ہے ۔انہوںنے گورنر انتظامیہ اور محکمہ صحت کے اعلیٰ افسران سے مطالبہ کیا کہ اس اسپتال کو جلد سے جلد چالو کرایا جائے تاکہ لوگوں کی قیمتی جانوں کو بچایا جاسکے۔