پونچھ میں کان کنی کولے کر ضلع انتظامیہ کا اجلاس

پونچھ//اضافی ترقیاتی کمشنر پونچھ ڈاکٹر بشارت حسین نے کان کنی کے سلسلہ میں منعقد ایک عوامی اجلاس کی صدارت کی۔ اس منصوبے میں 6.42 ہیکٹر رقبے پر بلاک نمبر 01 میں دریائے سرن ، شیر کشمیر برج پارٹ 1 اور ضلع پونچھ میں ریت کی کان کنی کا تصور ہے۔ ڈویژنل آفیسر آلودگی کنٹرول کمیٹی بدر حسین نے ابتدائی کلمات میں اضافی ترقیاتی کمشنر کا استقبال کیا۔ اپنے صدارتی خطاب کے دوران اضافی ترقیاتی کمشنر پونچھ ڈاکٹر بشارت حسین انقلابی نے کہا کہ بعض ترقیاتی منصوبوں کیلئے ماحولیاتی منظوری کے عمل میں عوامی سماعت ایک لازمی قدم ہے۔ پروگرام کے دوران پی آر آئی کے ارکان اور مقامی لوگوں نے کان کنی سے متعلق اور دیگر ترقیاتی مسائل اٹھائے ، جن میں غیر قانونی کان کنی کے خلاف سخت کارروائی کرنے کو کہا گیا۔ انہوں نے کہا کئی بچے غیر قانونی کان کنی کی وجہ سے دریا میں ڈوب گئے۔ ٹینڈرنگ کیلئے مقامی لوگوں کو ترجیح دی جائے تاکہ بے روزگار نوجوان فائدہ اٹھا سکیں اور دیگر کئی مسائل پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ شرکاء کی جانب سے دی گئی آراء کو بغور سننے کے بعد اضافی ترقیاتی کمشنر نے مجوزہ ریور بیڈ مائننگ پراجیکٹ کے حوالے سے دلچسپی پیدا کرنے اور سامعین میں بیداری پیدا کرنے کیلئے پہل کی۔ انہوں نے لوگوں سے پوچھا کہ اگر کوئی آپ کے علاقے میں غیر قانونی کام کرتا پایا جاتا ہے تو اپنے پی آر آئی ممبران یا انتظامیہ کو بتائیں تاکہ مجرم کے خلاف سخت کارروائی کی جا سکے۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ رات کو کان کنی غیر قانونی ہے۔ انہوں نے یقین دلایا کہ مقامی معدنیات کے معقول نرخوں اور ان کے متعلقہ گاؤں کے کان کنی کے حقوق کے حقیقی خدشات کو مناسب طریقے سے حل کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ دھول کے اخراج کو کنٹرول کرنے کے لیے دن میں دو بار سڑک پر پانی کا چھڑکاؤ کیا جائے گا۔ پی آر آئی اراکین اور مقامی لوگوں نے ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر کا ریور بیڈ مائننگ پروجیکٹ کیلئے عوامی سماعت کے انعقاد پر شکریہ ادا کیا۔ آخر میںڈویژنل آفیسر پولیوشن کنٹرول کمیٹی بدر حسین نے شکریہ ادا کیا۔