پونچھ راولاکوٹ راہ ملن بس سروس

پونچھ // ہندوپاک حکومتوں میں باہمی رشتوں کو استوار کرنے کے سلسلہ میں چلائی گئی ہفتہ وار راہ ملن بس سروس ہر ہفتہ کی طرح اس بار بھی حد متارکہ کے آرپار ہوئی۔اس دوران سپورٹس سٹیڈیم پونچھ سے راولاکوٹ کو روانہ ہونے والی بس سے صرف ایک مسافر روانہ ہوا۔یہ مسافر تقریبا ڈیڑھ ماہ تک پونچھ میں اپنے رشتے داروں کے ساتھ ملاقات کے بعد اپنے وطن پاکستانی زیر انتظام کشمیر کے راولاکوٹ کو روانہ ہوا۔اس بار بھی کوئی بھی نیا مسافر پونچھ سے راولاکوٹ کو روانہ نہیں ہوا۔ادھر پاکستانی زیرانتظام کشمیر سے پونچھ پہنچنے والی بس میں صرف ایک مسافر پاکستانی زیر انتظام کشمیر کے راولاکوٹ سے پونچھ میں رہنے والے رشتے داروں سے ملاقات کرنے کیلئے پہنچا۔اس طرح اس بار کل دو مسافروں نے حدمتارکہ کے آر پار کا سفر کیا۔اس حوالے سے کسٹوڈین چکاں دا باغ ٹریڈ سینٹر نے کہا کہ انتظامیہ کی جانب سے کسی بھی طرح کی کوئی بھی کمی نہیں رکھی جا رہی۔ انہوں نے کہا ماہ مبارک رمضان میں چونکی لوگ سفر کرنا پسند نہیں کرتے شاید یہی وجہ ہے کہ اس بس سے کم لوگ سفر کررہے ہیں انہوں نے کہا کہ ماہ رمضان کے بعد امید ہے کہ پہلی طرح لوگ اس بس سے سفر کریں گے۔