پنچایت گھر سنٹر گلہوتہ کی عمارت 15برسوں سے مکمل ہی نہیں کی گئی زیر تعمیر ڈھانچہ آہستہ آہستہ کھنڈرات میں تبدیل ہوگیا ،انتظامیہ خامو ش تماشائی

جاوید اقبال

 

مینڈھر //مینڈھر سب ڈویژن کی سنٹر پنچایت گلہوتہ میں گزشتہ 15برسوں سے پنچایت گھر کی عمارت مکمل ہی نہیں ہو سکی جس کی وجہ سے پنچایتی اراکین کو کئی طرح کے مسائل کاسامنا کرنا پڑتا ہے ۔پنچایتی اراکین نے متعلقہ محکمہ اور سیول انتظامیہ کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ زیر تعمیر عمارت آہستہ آہستہ کھنڈرات میں تبدیل ہونا شروع ہو گئی ہے جبکہ اس سلسلہ میں متعلقہ حکام سے کئی مرتبہ رابطہ کیاگیا تاہم یقین دہانیوں کے بعد بھی مذکورہ پروجیکٹ کو مکمل نہیں کیاگیا ۔

 

 

 

مقامی لوگوں نے محکمہ دیہی ترقی کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ دیہات میں تعمیر اتی عمل تو دور کی بات ہے لیکن محکمہ کی جانب سے اپنی ہی عمارت گزشتہ 15برسوں سے تشنہ تکمیل ہے ۔انہوں نے بتایا کہ عمارت کی تعمیر کا عمل 2008میں شروع کیاگیا تھا لیکن اس کے بعد صرف دیواریں ہی کچھ حد تک تعمیر کی جاسکی تاہم اس کے بعد نامعلوم وجوہات کی بنیادی پر پروجیکٹ کو مکمل ہی نہیں کیاجارہا ہے ۔مقامی لوگوں و پنچایتی اراکین نے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ ابھی تک ڈھانچے کی تعمیر پر خرچ ہوئے فنڈز کی جانچ کیلئے تفصیلی انکوائری کروائی جائے جبکہ عمارت کو مکمل کرنے کیلئے عملی بنیادوں پر اقدامات اٹھائے جائیں ۔دوسری جانب بلاک ڈیولپمنٹ آفیسر مینڈھر نے بتایا کہ انہوں نے حال ہی میں چارج سنبھالا ہے تاہم اس عمارت کی تعمیر کیلئے جانچ کروا کر عملی بنیادوں پر اقدامات اٹھائے جائینگے ۔