پنچایت گھر دبڑی بند گوہلد کی عمارت منہدم ہونے کے قریب | متعلقہ محکمہ خاموش تماشائی ،پنچایتی اراکین انتظامیہ سے ناراض

مینڈھر //مینڈھر سب ڈویژن کا پنچایت گھر دبڑی بن گوہلد انتہائی خستہ حال ہو کر منہدم ہونے کی دہلیز تک پہنچ گیا ہے لیکن گزشتہ کئی برسوں سے متعلقہ محکمہ و مقامی انتظامیہ کی جانب سے اس کی مرمت کے سلسلہ میں کوئی عملی قدم نہیں اٹھایا گیا ہے ۔پنچایتی اراکین نے محکمہ کے ملازمین و اعلیٰ آفیسران پر الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ پنچایت گھر کی مرمت کے سلسلہ میں کئی مرتبہ اعلیٰ آفیسران سے ملا قاتیں کی گئی لیکن ابھی تک اس جانب کوئی دھیان نہیں دیا گیا ہے ۔انہوں نے بتایا کہ محکمہ کی نا اہلی کی وجہ سے اب عمارت کا پلستر گرنے کیساتھ ساتھ کھڑکیاں اور دروزے بھی بوسیدہ ہو کر گر گئے ہیں ۔پنچایتی اراکین نے بتایا کہ گزشتہ کئی عرصہ سے مذکورہ عمارت میں کوئی بھی پنچایتی اجلاس منعقد ہی نہیں کیا گیا ہے ۔غور طلب ہے کہ پنچایتی اراکین کو بنیادی سہولیات فراہم کرنے کیلئے کئی پنچایتی میں مذکورہ نوعیت کی عمارتیں تعمیر کی گئی ہیں لیکن تعمیر کے بعد ان عمارت کی دیکھ بھال ہی نہیں کی گئی جس کی وجہ لاکھوں روپے خرچ کرنے کے بعد اب عمارتیں نا قابل استعمال ہو گئی ہیں ۔مذکورہ پنچایت کے اراکین نے ضلع ترقیاتی کمشنر پونچھ سے اپیل کرتے ہوئے کہاکہ عمارت کی مرمت و تعمیر نو کیلئے متعلقہ محکمہ کو ہدایت جاری کی جائیں تاکہ اراکین کو پریشانی کا سامنا نہ کرنا پڑے ۔