پشاور زلمی پاکستـان سُپر لیگ پر قـابض

 لاہور //پاکستان سپر لیگ کے فائنل میچ میں پشاور زلمی نے کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کواٹھاون رنز شکست دے کر خطاب اپنے نام کر لیا ہے ۔لاہور میں کھیلے گئے اس میچ میں کوئٹہ کی ٹیم کے کپتان سرفراز احمد نے ٹاس جیت کر پہلے فیلڈنگ کا فیصلہ کیا۔ پشاور نے اس ٹی ٹوئنٹی میچ میں مقررہ اوورز میں 148 رنز بنائے اور اس کے چھ کھلاڑی آؤٹ ہوئے ۔جواب میں کوئٹہ کی ٹیم سترہویں اوور میں نوّے کے مجموعی اسکور پر ڈھیر ہو گئی۔پشاور کی ٹیم میں وکٹ کیپر بلے باز کامران اکمل نمایاں بلے باز رہے ، جنہوں نے بتیس گیندوں پر چالیس رنز بنائے ۔ اگرچہ کامران اکمل کے آؤٹ ہونے کے بعد پشاور کی ٹیم کو شاہد آفریدی کی کمی شدت سے محسوس ہوئی لیکن کپتان ڈیرن سیمی نے اختتامی اوورز میں انتہائی شاندار انداز میں کھیلتے ہوئے اپنی ٹیم کا مشکل سے نکالا۔ انہوں نے گیارہ گیندوں پر اٹھائیس رنز بنائے ۔شاہد آفریدی انجری کے باعث یہ فائنل میچ نہ کھیل سکے لیکن وہ میچ کے دوران اپنی ٹیم کی حوصلہ افزائی کرتے رہے ۔ جیسے ہی کوئٹہ کی ٹیم کا آخری کھلاڑی آؤٹ ہوا، تو دیگر کھلاڑیوں سمیت شاہدی آفریدی بھی ڈریسنگ روم سے نکل کر خوشی سے گراؤنڈ کی طرف دوڑ پڑے ۔کوئٹہ کی ٹیم اس فائنل میچ میں کوئی خاص کارکردگی نہ دکھا سکی اور پوری ٹیم سترہویں اوور میں نوّے کے مجموعی اسکور پر ڈھیر ہو گئی۔ اس کی ایک وجہ یہ بھی قرار دی جا رہی ہے کہ کوئٹہ ٹیم کے غیر ملکی کھلاڑی اس میچ میں شرکت کے لیے لاہور نہ آئے ۔کامیابی پر دلکش ٹرافی کے ساتھ زلمی کو پانچ لاکھ امریکی ڈالرز کی انعامی رقم پیش کی گئی۔ڈیرن سیمی کو میچ میں تین فلک بوس چھکے لگانے اور شاندار کپتانی کرنے پر مین آف دی فائنل کا حقدار ٹھہرایا گیا۔پشاور زلمی کے کامران اکمل کو 353 رنز بنانے پر ٹورنامنٹ کا بہترین بلے باز اور وکٹ کیپر قرار دیا گیا۔ کامران کو پلیئر آف دی ٹورنامنٹ کا بھی حقدار ٹھہرایا گیا اور انہیں 65 ہزار امریکی ڈالرز کی انعامی رقم دی گئی۔کراچی کنگر کے سہیل خان ایونٹ کے بہترین بولر رہے ۔(یواین آئی)