پریشان تاجر گورنر سے ملاقی ،تعاون طلب

 سرینگر //سلام آباد حد متارکہ کے آر پار تجار ت کرنے والے تاجر انجمنوں کا ایک وفد کل یہاں راج بھو ن میں انجمن کے صدر ہلال تُرکی کی قیادت میں گورنر این این ووہر اسے ملاقی ہوا۔ وفد نے حد متارکہ کے آر پار تجار ت کو باقاعدہ بنانے کے لئے تعطل میں پڑے اقدامات کو عمل میںلانے کے لئے گورنر سے تعاون طلب کیا۔ اُنہوںنے جی ایس ٹی نظام کے تحت درآمد شدہ اشیاء کو اس ٹیکس سے مبرا رکھنے ، حد متارکہ کے آر پار تجارت اور تاجروں پر نگرانی کے لئے ریاستی اور مرکزی ایجنسیوں پر مشتمل خصوصی سیل کو تشکیل دینے ،تاجروں کی سالانہ جانچ سہ ماہی بنیاد پر بین الااقوامی کرنسی مارکیٹ کی شرحوں پر کرنسی کا تبادلہ ، اشیاء کی درآمد کے لئے کنٹینر والی گاڑیوں کی فراہمی، تجارت کی سہولیت کے لئے بینکنگ نظام کا قیام ، بین الاقوامی معیار کے گودام کی تعمیر،حد متارکہ کے آر پار تجارت کرنے و الے تاجروں کے اکائونٹس پر نظررکھنے ، پراکسی ٹریڈنگ کی بدعت پر قابو پانے،روزانہ ٹرکوں کی تعداد میں اضافہ ،تاجروں کے لئے آئی ایس ڈی اور دیگرکمیونیکیشن سہولیات کی فراہمی،ٹی ایف سی سلام آباد اوڑی میں فل باڈی سکینروں اور ٹی ایف سی کمان پوسٹ میں سی سی ٹی وی کی تنصیب وغیر ہ مانگوں کو پورا کرنے کے لئے گورنر سے ذاتی مداخلت کرنے کے لئے کہا۔ گورنر نے کہا کہ وہ وفد کی مانگیں مرکزی حکومت اور ریاست کے وزیراعلیٰ کے ساتھ اُٹھائیں گے۔