پبلک سیکٹر انڈرٹیکنگس کو بند کرنا صدمہ خیز

سرینگر//یو این آئی// نیشنل کانفرنس اور پی ڈی پی نے جموں وکشمیر انتظامیہ کی طرف سے کئی پبلک سیکٹر انڈرٹیکنگس (پی ایس یوز) کو بند کرنے کے مبینہ فیصلے کو صدمہ خیز قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ اس سے یونین ٹریٹری میں بے روزگاری میں مزید اضافہ ہوجائے گا۔ بتادیں کہ جموں وکشمیر حکومت نے جے اینڈ کے سمال سکیل انڈسٹریز ڈیولپمنٹ کارپوریشن (ایس آئی سی او پی)، جے اینڈ کے منرلز لمیٹڈ اور جے اینڈ کے انڈسٹریز لمیٹڈ کو بند کرنے اور جے اینڈ کے سیمنٹز لمیٹڈ کی نجکاری کرنے کی تجویز پیش کی ہے۔نیشنل کانفرنس نے اس تجویز کے رد عمل میں اپنے آفیشل ٹویٹر ہینڈل پر ایک ٹویٹ میں کہا: 'جموں و کشمیر حکومت کا کئی پی ایس یوز کو بند کرنے کا فیصلہ چونکا دینے والا ہے۔ نوکریوں کے نئے مواقع پیدا کرنے کی بجائے جموں و کشمیر انتظامیہ موجودہ سرکاری ملازموں کو نکال باہر کرکے بے روزگاری میں اضافہ کرنے پر بضد ہے'۔پی ڈی پی نے اپنے آفیشل ٹویٹر ہینڈل پر رد عمل ظاہر کرتے ہوئے ایک ٹویٹ میں کہا: 'جموں و کشمیر انتظامیہ کی طرف سے کئی پی ایس یوز کو بند کرنے کا فیصلہ صدمہ خیز ہے۔ ایک ایسے وقت جب جموں و کشمیر کو بے روزگاری کے چیلنج کا سامنا ہے ضرورت اس بات کی ہے کہ نوکریوں کے مزید مواقع پیدا کئے جاتے، حکومت کا یہ فیصلہ بے روزگاری کو مزید بڑھانے کی ایک کوشش ہے'۔