پاک زیرانتظام کشمیرمیں کورونامعاملوں میں اضافہ | پھر سے مکمل لاک ڈائون کے نفاذ کااصولی فیصلہ

سرینگر//پاک زیر انتظام کشمیر میں کوروناوائرس کیسوں میں اضافے کے پیش نظر پھر سے لاک ڈاون کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔اس حوالے سے وزیراعظم پاک زیر انتظام کشمیر راجہ فاروق حیدر نے کہا کہ مظفرآباد میں کورونا کے مثبت کیسز کی شرح 8.3 فیصد ہے، جو پاکستان میں سب سے زیادہ ہے، جس کی بنا پر کشمیر بھر میں دوبارہ لاک ڈاؤن نافذ کرنے کا اصولی فیصلہ کیا گیاہے۔سی این آئی، کے مطابق کورونا وائرس کے بڑھتے ہوئے کیسز کے پیش نظر پاک زیر انتظام کشمیر میں ایک بار پھر لاک ڈاؤن نافذکرنے کا فیصلہ کیا گیاہے۔ اس حوالے سے پاک زیر انتظام کشمیرکے وزیراعظم راجہ فاروق حیدر نے کہا کہ مظفرآباد کشمیر میں کورونا وائرس کے مثبت کیسز کی شرح 8.3 فیصد ہے، جو پاکستان میں سب سے زیادہ ہے، جس کی بنا پرپاک زیرانتظام کشمیر بھر میں دوبارہ لاک ڈاؤن نافذ کرنے کا اصولی فیصلہ کیا گیاہے، کیوں کہ اس سے پہلے کہ حالات بے قابو ہوجائیں، ایسے اقدامات لازمی ہیں۔انہوں نے کہا کہ ہمارے محدود وسائل ہیں، اس بناپر لاک ڈاؤن کی حکمت عملی طے کرنی پڑے گی۔بتایا گیا ہے کہ قبل ازیں وزیراعظم پاک زیر انتظام کشمیر راجہ فاروق حیدر کی زیر صدارت اعلیٰ سطح کا ایک اجلاس ہوا، جس میںمظفرآباد کشمیر میں کورونا کے بڑھتے ہوئے کیسز پر تشویش کا اظہار کیا گیا۔اجلاس میں پرنسپل سیکریٹری، سیکریٹری داخلہ،اور سیکریٹری صحت سمیت دیگر حکام نے شرکت کی،جس میں فیصلہ کیا گیا کہ پاک زیرانتظام کشمیر کے تمام داخلی راستوں، پبلک ٹرانسپورٹ اور تعلیمی اداروں میں کورونا سے بچاؤ کے ایس او پیز پر مکمل عمل درآمد کروایا جائے گا۔