پاکستان کشمیری قوم کا بے بدل محسن:مزاحمتی خیمہ

سرینگر// پیپلزپولٹیکل فرنٹ چیئرمین محمد مصدق عادل نے پاکستان کی حکومت و جملہ سیاسی قیادت ، پاکستانی عوام اور افواجِ پاکستان کا یومِ یکجہتی  منانے کے لئے شکریہ ادا کرتے ہوئے کہاہے کہ اہل کشمیر کا مملکت خدادادپاکستان  کے ساتھ ایک نظریاتی ، روحانی اور جذباتی رشتہ ہے ۔ جس کے پیشِ نظریہ مملکت ہر کشمیری  کے لئے  ہمیشہ سے ہی اسکی امیدوں اور آرزئوں کا مرکز رہا ہے ۔جموں و کشمیر مسلم پرسنل لاء بورڈ کے نائب صدر مفتی ناصر لا سلام نے پاکستان کے اس عزم کا شکریہ کیا کہ دراصل اس دن کامنایا جانا اُس عہد کی تجدید ہے کہ مسئلہ کشمیر کا دائمی حل استصواب رائے میں ہی مضمر ہے۔انہوں نے کہا کہ اقوام عالم کو کشمیر کے مسئلہ کشمیر کے دائمی حل کیلئے آگے آنا چاہئے تاکہ مزید خون خرابہ روکا جاسکے ۔انہوں نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی نے حسب معمول مسئلہ کشمیر کے دائمی حل کی بات کرنے کے بجائے روایتی انداز میں عسکریت کی کمر توڑ نے کی بات کرتے ہوئے کشمیر ی عوام کے جذبات اور احساسات کو ٹھیس پہنچائی بلکہ یہ جانتے ہوئے بھی کہ کشمیر کی متنازعہ حیثیت کوبین الاقوامی سطح پر تسلیم کیا گیا ہے اور اس کا فیصلہ کشمیری عوام کی خواہشات اور احساسات کے مطابق ہونا چاہئے ۔انجمن شرعی شیعیان کے سربراہ اورسینئر حریت رہنما آغا سید حسن نے یوم یکجہتی کشمیرکے موقعہ پر پاکستانی قوم و قیادت کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا ہے کہ 5 فروری کو پاکستانی قوم اور قیادت کشمیری عوام کے ساتھ یوم یکجہتی مناکر عالمی برادری کی توجہ اس دیرینہ سیاسی تنازعے کی طرف مبذول کرتی ہے جس کے مستقل حل کیلئے بھارت اور پاکستان نے عالمی برادری کے سامنے کشمیری قوم کو حق خود ارادیت دینے کا وعدہ کررکھا ہے۔ انہوں نے کہا کہ کشمیری قوم سات دہائیوں سے اسی تسلیم شدہ حق خود ارادیت کے حصول کی جدوجہد کررہے ہیں۔ بھارت عالمی برادری کے سامنے کئے گئے وعدوں اور یقین دہانیوں کے برعکس کشمیریوں کی آواز دبانے کیلئے جبرو تشدد کی پالیسی پر گامزن ہے جبکہ پاکستان روز اول سے ہی کشمیریوں کے حق خود ارادیت کی جرأت مندانہ وکالت کرتا چلا آرہاہے اور اس راہ میں کئی بار پاکستان کی عرضی سالمیت بھی داؤ پر لگ چکی ہے۔ آغا حسن نے کہا کہ پاکستان نے ہر قسم کے حالات میں کشمیریوں کی سیاسی ، سفارتی اور اخلاقی حمایت جاری رکھ کر اس قوم کے سیاسی جذبات اور خواہشات کی بھر پور ترجمانی کی ہے۔دختران ملت نے پاکستان کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا ہے کہ ڈاکٹر قاسم کا معاملہ بین الاقوامی عدالت میں لے لیاجائے اور اپنا رول تندہی سے ادا کرے۔انہوں نے کہا کہ یوم یکجہتی کشمیر کے سلسلے میں لندن میں ہورہی کشمیر کانفرنس بھی حوصلہ افزاء ہے اور امید ہے کہ پاکستان کشمیر کیلئے مزید مثبت اقدام کرتا رہے گا۔ایک بیان میں دختران ملت نے کہا ہے کہ بھارتی جمہوریت نے اپنے ہی قائم کردہ حق و انصاف کے ضوابط کو ڈاکٹر محمد قاسم کے معاملے میں پیروں تلے روندھ دیا ہے۔مسلم کانفرنس نے پاکستانی حکومت اورعوام کا 5 فروری کو یوم یکجہتی کشمیر منانے پر شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ جس طرح سے پاکستانی عوام اپنے کشمیری بھائیوں کے شانہ بہ شانہ بھارتی مظالم کا مقابلہ کر رہے ہیں وہ اس تاریخی حقیقت کا اظہار ہے کہ کشمیر اور پاکستان کے لوگ ایک ہیں اورایک دوسرے کے دکھ درد کو ساجھا سمجھتے ہیں۔تنظیم کی مجلس عاملہ کا ایک خصوصی اجلاس مرکزی دفتر پر چیئر مین شبیر احمد ڈار کی صدارت میں منعقد ہوا جس میں مرکزی قائدین محمد رمضان ،شمیم احمد ، محمد امین ، مظفر احمد ،شریف الدین اور دوسرے ممبران شریک ہوئے۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے ڈار نے کہا کہ کشمیری حریت پسندوں کی قربانیاں بہت جلد رنگ لائیں گی کیونکہ عالمی طاقتیں اب اس بات کو سمجھنے لگی ہیں کہ بھارت اپنے فوجی طاقت کی بنیاد پر کشمیر کی مبنی بر حق تحریک آزادی کو دبانا چاہتا ہے اور اس پوری قوم کے جذبات اور احساسات کو بڑی بے دردی کے ساتھ کچلنے کی سعی لا حاصل کر رہا ہے۔ پیپلز لیگ کے سینئر وائس چیئرمین محمد یاسین عطائی نے پاکستان کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کی حکومت اور عوام نے اپنے کشمیری بھائیوں کی تحریک آزادی میں جو گراں قدر خدمات پیش کی ہیںوہ کبھی بھی فراموش نہیں کی جاسکتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کشمیری تحریک مزاحمت کو پاکستانی عوام کی سیاسی،سفارتی اور اخلاقی حمایت پر ہم ان کے بے حد مشکور و ممنون ہیں۔پیروان ولایت ملت اسلامیہ پاکستان کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان کشمیریوں کا محسن ملک ہے جو گزشتہ ستر برسوں سے کشمیریوں کو حصول حق خودارادیت دلوانے کیلئے سفارتی ،اخلاقی اور سیاسی سطح پر مدد کررہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان مسئلہ کشمیر کا ایک فریق ہے جو مسئلہ کشمیر کے منصفانہ حل کیلئے بحسن خوبی اپنے فرائض انجام دے رہا ہے۔ مولانا نے کہا کہ پاکستان ملت کشمیر کے دلوں کی دھڑکن ہے اورکشمیری قوم پُرامید ہے کہ حصول حق خودارادیت کیلئے پاکستان سیاسی اخلاقی و سفارتی سطح پر زور و شور سے حمایت جاری رکھے گا۔اسلامی تنظیم آزادی چیئرمین عبدالصمد انقلابی نے 5فروری کویومِ یکجہتی کشمیر منانے کیلئے پاکستانی حکومت، فوج اور عوام کا دل کی عمیق گہرائیوں سے شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ کشمیری عوام پچھلے71سال سے اپنے حقِ خودارادیت کیلئے برسر جدوجہد ہے اور اس جدوجہد میں پاکستان روزِ اول سے ان کی سیاسی، سفارتی اور اخلاقی سطح پر مدد کرتا آرہا ہے۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان دنیا کا وہ واحد ملک ہے، جو کشمیریوںکے حقِ خودارادیت کو خود بھی تسلیم کرتا ہے اور عالمی برادری کے سامنے اس کی وکالت بھی کرتا ہے۔