پانی کی سپلائی ایک ماہ سے بند

 
مینڈھر//مینڈھر کے پٹھانہ تیر علاقے کے لوگوں نے پانی کی سپلائی بند ہونے پر احتجاجی مظاہرہ کیا ۔مقامی لوگوں نے محکمہ پی ایچ ای کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے کہاکہ ایک ماہ سے ان کو پانی کی سپلائی فراہم کرنے والی سکیم بند پڑی ہے ۔انہوں نے کہاکہ محکمہ کے عارضی ملازم لوگوں کی گھاس کٹائی میں مصروف ہیں جبکہ مستقل ملازمین کہتے ہیں کہ انہیں موٹر چلانی ہی نہیں آتی جس وجہ سے سپلائی بند پڑی ہے ۔ایک مقامی نوجوان فیصل شاہ نے بتایا کہ اگر متعلقہ جونیئر انجینئر کو فون کیاجائے تو دو باتیں کرکے فون ہی کاٹ دیتاہے جبکہ مستقل ملازمین کا جواب ہوتاہے کہ ان کو موٹر چلانی نہیں آتی ۔انہوں نے کہاکہ انتہائی درجہ کی لاپرواہی برتی جارہی ہے اور کوئی ذمہ داری لینے کو تیار نہیں ۔ان کاکہناہے کہ اس معاملے پر ایگزیکٹو انجینئر پونچھ سے بھی بات ہوئی تاہم انہوں نے بھی کوئی اقدام نہیں کیا ۔مقامی لوگوں کاکہناہے کہ وہ پانی کیلئے دربدر ہیں اور یہ بیان کرنا مشکل ہے کہ پانی کا بندوبست کیاجارہاہے ۔ انہوںنے کہاکہ اگر محکمہ نے سپلائی بحال نہ کی تو وہ بڑ ے پیمانے پر احتجا ج کریں گے جس کی تمام ترذمہ داری حکام پر عائد ہوگی ۔رابطہ کرنے پر اے ای ای محکمہ پی ایچ ای مینڈھر نے کہاکہ وہ یہ دیکھیں گے کہ پامی کی سپلائی کیوں بند ہوئی ہے اور ایک دوروز میں ہی سپلائی بحال کروائی جائے گی ۔