پارلیمانی چنائو کا بائیکاٹ عوام کیلئے فرض: مزاحمتی خیمہ

سرینگر // نیشنل فرنٹ ، مسلم لیگ ،لبریشن فرنٹ، فریڈم پارٹی اور ٖڈیمو کریٹک پولیٹکل مومنٹ نے پا رلیمانی انتخاباب سے مکمل بائیکاٹ کرنے کی اپیل کو دہراتے ہوئے لوگوں سے کہا ہے کہ وہ الیکشن ڈرامہ سے دور رہیں ۔ نیشنل فرنٹ چیئرمین نعیم احمد خان نے کہا کہ متنازعہ خطہ کے لوگ حق خود ارادیت کیلئے محو جد و جہد ہیں اور الیکشن ڈرامہ بین الاقوامی سطح پر تسلیم شدہ حق کا متبادل نہیں ہوسکتا ہے۔انہوں نے لوگوں پر زور دیا کہ وہ استقامت کا مظاہرہ کرتے ہوئے جد و جہد آزادی کی آبیاری کریں۔نعیم خان نے اپنے ایک بیان میں کہا’’لوگوں کو حق کی راہ پر گامزن رہتے ہوئے اُمید کا دامن نہیں چھوڑنا چاہئے۔ہمیں اس بات کا خاص خیال رکھنا چاہئے کہ ہم نے اجتماعی و انفرادی سطحوں پر آزادی کی راہ میں بے مثال قربانیاں پیش کی ہیں اور اب وقت آگیا ہے کہ ہم اپنی عظیم قربانیوں کا تحفظ کریں‘‘۔نعیم خان نے 2016کے دوران پیش کئے گئے جوش و جذبے کو سلام پیش کرتے ہوئے کہا کہ ہمیں ایک بار پھر مضبوط ارادی کا مظاہرہ کرتے ہوئے الیکشن ڈرامہ سے دور رہنا چاہئے۔لوگوں نے حال ہی میں سینوں پر گولیاں کھائیں، گذشتہ برس ہمارے اپنوں کی آنکھوں کی بینائی چھینی گئی اس لئے ہمیں چاہئے کہ ان مظالم کو نہ بھولیں اور بھارتی الیکشن ڈرامہ سے مکمل طور دور رہیں۔انہوں نے مزید کہا کہ اگر عام لوگوں کو اپنا سیاسی مؤقف ظاہر کرنے کیلئے ووٹ ڈالنے کا موقع فراہم کیا جائے تو ان بھارت نواز پارٹیوں کو ایک ووٹ بھی نصیب نہیں ہوگا اور نہ انہیں کوئی پولنگ ایجنٹ ملے گا۔نعیم خان نے وسطی اور جنوبی کشمیر کے لوگوں پر زور دیتے ہوئے کہا کہ وہ الیکشن عمل سے دور رہیں اور اس ضمن میں پہلے ہی مشتہر حریت کانفرنس کے پروگرام پر من و عن عمل کریں۔اس دوران مسلم لیگ کے ترجمان سجادایوبی کے مطابق لیگ کے رہنماؤں اور کارکنوں نے مختلف اضلاع میں الیکشن بائیکاٹ مہم چلائی اور عوام سے ان الیکشنوں سے دور رہنے کی اپیل کی۔اس ضمن میںفاروق غوطہ پوری نے جامع مسجد بڈگام میں خطاب کے بعد مسجد کے ملحقہ علاقوں میں،صدرضلع پلوامہ عبدالرشیدڈار نے بچبہاڑا،غلام حسن نے ترال  میں لوگوں کو الیکشن کے شر سے بچنے کی تاکید کرتے ہوئے کہا اس نازک گھڑی میں قوم خصوصاََ نوجوانوں سے مخلصانہ اپیل ہے کہ وہ بھارت کی ان چالوں کو سمجھے اور تعمیروترقی کے کھوکھلے نعروں میں آکر بھارتی آلہ کاروں کے یرغمال نہ بنے کیونکہ ٹھوڑا سا جھکاؤ بھی شہیدوں کے خون کے ساتھ غداری ہے اور لٹی عصمتوں اور مٹی عزتوں کے ساتھ سودابازی کے مترادف ہے۔ڈیمو کریٹک پولیٹکل مومنٹ کے چیئرمین فردوس احمد شاہ نے اپنے ایک بیان میں ضلع سرینگر اور ضلع اسلام آباد کی عوام سے ایک بار پھر اپیل کی ہے کہ وہ نام نہاد ضمنی پارلیمانی الیکشن ڈرامے کا مکمل بائیکاٹ کرکے ایک باز پھر اپنی تحریک کے تئیںبھر پور وفاداری کا اعادہ کریں جیساکہ عوام الناس جانتے ہیں کہ بھارت فوجی جمائو کے بل بوتے پر چند اپنے حواریوں کو آ گے لاکر نام نہاد الیکشن ڈرامہ رچا کر اقوام عالم کو گمراہ کرنے کی کوشش کر رہا ہے۔بھارت پچھلے50سالوں سے یہاں ایسے ڈرامے رچاتا آیا ہے۔ جس میں یہاں کے چند افراد اُسکی مدد کر تے آ رہے ہیں۔اسی طرح لبریشن فرنٹ نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے فرنٹ کے زونل صدر نور محمد کلوال اور سینئر قائد ظہور احمد بٹ پچھلے کئی روز سے جنوبی کشمیر میں اس مہم کو آگے بڑھارہے ہیں جبکہ آج انہوں نے ضلع صدور محمد اسحاق گنائی اور جاوید احمد بٹ کے ہمراہ اسلام آباد کی مرکزی جامع اور ملحقہ علاقوں کے اندر اس مہم کو آگے بڑھایا۔ دونوں قائدین نے کئی عوامی اجتماعات سے خطاب بھی کیا جبکہ گھر گھر اور بازار وں میں جاکر بھی لوگوں سے اپیل کی گئی کہ وہ آنے والے الیکشن ڈرامے سے دور رہیں۔یہ وفد کولگام میں لنگن بل، فرسل اور ژانسر اور جامع مسجد مٹن بھی گیا اور وہاں بھی لوگوں سے بائی کاٹ کی اپیل کی۔ٖفریڈم پارٹی کے سیکریٹری مولانا محمد عبداللہ طاری نے بھی جنوبی اور وسطی کشمیرکی عوام سے اس انتخابات سے دوری اختیا رکرنے کی اپیل کرتے ہوئے کہا ہے کہ جو لوگ ریاست میں ہورہے ظلم و ستم کے خلاف گلہ پھاڑ پھا ڑ کر چیخ وپکار کررہے تھے ،آج وہی لوگ مسلمانوں کے قاتلوں کے ساتھ ہاتھ ملاکر ہماری تہذیب و شناخت کو مٹانے کے درپے ہیں ۔مولانا نے کہا کہ یہ لوگ اقتدار کے ایوانوں پر قبضہ جماتے ہی پیلٹ اور پاوا کے استعمال جائز ٹھراتے ہیں اور کرسی اقتدار ہاتھ سے جاتے ہی عوام کے ہمدرد اور غم خوار کا روپ دھار کر ٹسوے بہاتے ہیں ۔