پارلیمانی حلقہ واسمبلی حلقو ں کی ریزرویشن کی تجویز پر سیاسی لیڈران اورپہاڑی طبقہ میں ناراضگی،بڑے پیمانے پر احتجاج شروع کرنے کا انتباہ

کوٹرنکہ //کوٹرنکہ کے مختلف سیاسی لیڈران و عوامی حلقوں نے حد بندی کمیشن پر الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ غیر متوقعہ تجویز پیش کر کے عوام کے جذبات کیساتھ کھلواڑ کی گئی ہے ۔سابقہ کابینہ وزیر اور جموں وکشمیر اپنی پارٹی کے نائب صدر چوہدری ذوالفقار علی نے تجویز پر حیرانگی کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ حد بندی کمیشن نے جغرافیائی صورتحال اورحد بندی کے دیگر لورزامات کو یکسر نظرانداز کرتے ہوئے پیر پنچال میں اسمبلی حلقوں کی جوڑ توڑ کی ہے ۔انہوں نے جاری بیان میں کہاکہ اسمبلی حلقہ درہال بدھل کے نگروٹہ ،پلمہ ،سنکاری ،سانوکوٹ ،کوٹ دھڑا ودیگر علاقوں کو راجوری میں ضم کرنا سمجھ سے بالا تر ہے ۔انہوں نے کہاکہ وہ اس عمل پر اپنا اعتراض پیش کریں گے ۔سماجی کارکن محمد فاروق انقلابی نے حد بندی کمیشن کی عبوری رپوٹ کر عوام کے جذبات کیساتھ کھلواڑ کے مترداف قرار دیتے ہوئے کہاکہ ایسا لگتا ہے کہ کسی ایک خصوصی پارٹی کے منشور اور پالیسی کو ذہن میں رکھ کر تجویز سامنے لائی گئی ہے ۔دیگر معززین نے بھی تجویز کو یکسر مسترد کرتے ہوئے مذکورہ قدم قبول نہیں کیا جائے گا ۔
 
 

یوتھ کارکنوں کا وفد ایس ڈی ایم سے ملاقی 

جاوید اقبال 
مینڈھر //حد بندی کمیشن کی جانب سے پارلیمانی اور اسمبلی حلقوں میں تبدیلیاں اور خطہ پیر پنچال میں سیٹوں کو ریزرو کرنے کی تجویز کے بعد پہاڑیوں کا ایک وفد ایس ڈی ایم مینڈھر سے ملاقی ہوا ۔راجہ وسیم خان کی قیادت میں وفد نے حکومت کیلئے ایک یاداشت پیش کرتے ہوئے کہاکہ پہاڑی طبقہ کو یکسر نظر انداز کر نے کا عمل شروع کر دیا گیا ہے ۔اراکین نے کہاکہ گزشتہ کئی دہائیوں سے پہاڑیوں کو ایس ٹی کا درجہ ہی نہیں دیا جارہا ہے اور اب اسمبلی حلقوں کو ریزرو کر کے ان کیساتھ ناانصافیاں کی جارہی ہیں ۔انہوں نے کہاکہ پونچھ میں اسمبلی حلقوں کو ریزرو کرنے کے بعد پہاڑی طبقہ کی فلاح و بہبود کو یقینی بنانا انتہائی مشکل عمل بن جائے گا ۔یاداشت پیش کرنے کے بعد وفد میں شامل اراکین نے ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے بات کرتے ہوئے کہاکہ حد بندی کمیشن کی جانب سے ایسے اسمبلی حلقوں کو ریزرو کرنے کی تجویز پیش کی گئی ہے جہاں سے پہلے ہی ایس ٹی کے امید وار منتخب ہوتے رہے ہیں تاہم حکومت کو ایسے حلقوں کو منتخب کرنا چاہئے جہاںپر ایس ٹی طبقہ کی آبادی پسماندگی کا شکار ہوئی ہواور ان کی نمائیدگی بھی نہ ہو۔انہوں نے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ اس تجویز پر عمل نہ کیا جائے اگر انتظامیہ کی جانب سے سرحدی ضلع پونچھ کے مینڈھر اسمبلی حلقہ کو ریزرو کیا گیا تو بڑے پیمانے پر احتجاج شروع کر دیا جائے گا ۔وفد میں کفیل خان ،بابی خان و دیگران بھی موجود تھے ۔
 

بالا کوٹ میں پہاڑی معززین کا اجلاس 

جاوید اقبال 
مینڈھر //مینڈھر کی سرحدی تحصیل بالا کوٹ میں پہاڑی معززین کا ایک اجلاس منعقد ا ہوا جس میں اراکین نے بڑی تعداد میں شرکت کی ۔نظیر خان کی قیادت میں منعقدہ اجلاس میں بولتے ہوئے اراکین نے حد بنی کمیشن کی جانب سے اسمبلی سیٹوں کی ریزرویشن کو یکسر مسترد کر تے ہوئے کہاکہ پہاڑی قبائل کی مانگوں کو پہلے سے ہی پورا نہیں کیا جارہا ہے اور اب اسمبلی حلقوں کو ریزرو کر کے پسماندہ قبائل کو شدید مشکلات میں ڈالنے کی کوششیں کی جارہی ہیں ۔انہوں نے کہاکہ مینڈھر اسمبلی حلقہ میں لگ بھگ 70فیصد پہاڑی آبادی ہے لیکن اس کے باوجود بھی حد بندی کمیشن کی جانب سے اس سیٹ کو ریزرو کرنے کی تجویز رکھی گئی ہے ۔انہوں نے انتباہ دیتے ہوئے کہاکہ پہاڑیوں کیساتھ کی جارہی نا انصافیوں کو اب برداشت نہیں کیا جائے گا اور اگر حد بندی کمیشن کی مذکورہ تجویز پر عمل کیا گیا تو بڑ ے پیمانے پر احتجاج شروع کر دیا جائے گا ۔