پارلیمانی انتخابات میں نمایاں کارکر دگی پر این سی قیادت مبارک بادکی مستحق

مینڈھر//نیشنل کا نفرنس سنیئر لیڈر اور سابقہ ممبر اسمبلی مینڈھر نے پارلیمانی انتخابات میں شاندار کارکر دگی پر پارٹی قیادت کو مبارکباد پیش کرتے ہوئے کہاکہ انتخابی نتائج سے ثابت ہوچکا ہے کہ ریاست میں نیشنل کانفرنس ہی وہ واحد جماعت ہے جو تینوں خطوں اور مختلف طبقہ ہائے فکر کے عوام کی یکساں فلاح وبہبود اور تعمیر و ترقی کو ممکن بنا سکتی ہے ۔انھوں نے کہا کہ اب ریاستی عوام پی ڈی پی اور کانگرس جیسی فریبی جماعتوں کے کھوکھلے نعروں کو بخوبی سمجھ چکی ہے۔ اب کی بار وادی کی تینوں نشستوں پر نیشنل کانفرنس کی شاندار جیت نے یہ ثابت کر دیا ہے کہ ریاست میں آنے والی سرکار نیشنل کانفرنس کی ہو گی۔جاوید احمد رانا نے کہا کہ ملکی سطح پر بھارتیہ جنتا پارٹی کا دوبارہ اقتدار میں آنا ملک کی مجموعی عوام کا فیصلہ ہے جسے ہم سب تسلیم کرتے ہیں کیونکہ جمہوری طرز نظا م حکومت میں عوام کی طاقت کا سر چشمہ مانا جاتا ہے۔لہذا عوامی مینڈیٹ کو تسلیم کرتے ہوئے ہم عوام وزیر اعظم نریندر مودی کو شاندار جیت پر مبارک باد پیش کرتے ہیں اور امید کرتے ہیں کہ گذشتہ پانچ سالوں کے دوران ملکی عوام کے ساتھ جو تعصب اور نا انصافیاں ہوئی ہیں یقینا اب کی بار وزیر اعظم اپنی سرکار کی پالیسیوں پر از سر نو غور کریں گے اور سب کا ساتھ اور سب کا وکاس کے نعرہ پر عمل کرتے ہوئے پورے ملک میں مختلف مکتب ہائے فکر اور مذاہب کے ماننے والوں کی یکساں فلاح و بہبود کر سکیں گے۔جاوید احمد رانا نے کہا کہ اگر صوبہ جموں کی نشستوں پر نیشنل کانفرنس کے امیدوار میدان میں ہوتے تو یقینا آج اس خطے کا سیاسی نقشہ بھی وادی کی طرح ہی ہوتا لیکن پارٹی اعلی قیادت کا فیصلہ تسلیم کرتے ہوئے ہم نے اپنی طرف سے پوری قوت کے ساتھ کانگرس امیدوار کے حق میں حق رائے دہی کا استعمال کیا۔انھوں نے ریاستی عوام کو مبارک باد دیتے ہوئے یہ اپیل کی کہ آنے والے اسمبلی انتخابات میں نیشنل کانفرنس کے ہل والے پرچم تلے متحد ہو کر فرقہ پرست طاقتوں کو شکست دینے میں نیشنل کانفرنس قیادت کو اپنا تعاون دیں تاکہ ریاست کے تینوں خطوں کی یکساں تعمیر و ترقی ممکن ہو سکے۔