ٹی سی پی تا ڈگری کالج سرنکوٹ سڑک بدحالی کاشکار،کالج طلباء اورعام لوگ مشکلات جھیلنے پرمجبور

سرنکوٹ// ٹی سی پی سرنکوٹ تا ڈگری کالج سرنکوٹ سڑک کی ناگفتہ بہ حالت کی وجہ سے عام لوگوں کے ساتھ ساتھ طلباکومشکلات کاسامناکرناپڑرہاہے ۔مقامی لوگوں نے سڑک کی خستہ حالی پرمحکمہ گریف کی خاموشی پرتشویش کااظہارکرتے ہوئے ضلع انتظامیہ سڑک کی بدحالی دورکرنے کیلئے مداخلت کامطالبہ کیاہے۔اس سلسلے میں ایک مقامی نوجوان ناصر مرزا نے  کہا کہ  چیک پوسٹ سے لیکر ڈگری کالج تک سڑک کی حالت نہایت ہی خستہ ہے جس پر پیدل چلنے والے راہگیروں کا کیچڑ سے گذر ناپڑتا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ سڑک کنارے نالیوں کا نام و نشان تک نہیں ہے جس کی وجہ سے پانی کا نکاس نہیں ہو پاتا ہے اور  پانی سڑک پر جمع رہتاہے ۔انہوں نے کہاکہ نکاسی نظام ناقص ہونے کی وجہ سے عام راہگیرپریشانیاں جھیلتے ہیں۔انہوں نے کہاکہ سڑک پر جگہ جگہ کھڈے بن گئے ہیںجس کی وجہ سے گاڑیوں کو کافی نقصان پہنچتا ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ سڑک پر تارکول کے بجائے کیچڑ نظر آتا ہے اورکالج طلباکوشدیدمشکلات جھیلنی پڑرہی ہے۔انہوں نے کہاکہ خشک موسم میں سڑک پردھول ہی دھول ہوتی ہے اوربارش کے موسم میں کیچڑہی کیچڑ۔ انہوں نے ضلع ترقیاتی کمشنر پونچھ راہل یادو سے اپیل کی ہے کہ متعلقہ محکمہ کو جلد سے جلد متحرک کیا جائے اور چیک پوسٹ سے کالج تک سڑک کی مرمت کروائی جائے۔ انہوں نے مطالبہ کیا ہے کہ فوری طور پر سڑک پر تارکول بچھائی جائے اور نالیاں بنائی جائیں تاکہ پانی کی نکاسی ہو اور پیدل چلنے والے راہگیروں کو مشکلات کا سامنا نہ کرنا پڑے۔