ٹماٹر بحران: قیمت کنٹرول کرنے کیلئے درآمدات کا راستہ کھلا نیپال بڑی مقدار میں فصل بھیجنے کیلئے تیار

عظمیٰ مانیٹرنگ ڈیسک

سرینگر//آسمان چھوتی قیمتوں کو روکنے کے لیے طویل مدتی بنیادوں پر نیپال نے بھارت کو ٹماٹر بڑی تعداد میں برآمد کرنے کے لیے آمادگی ظاہر کی ہے اور اس کیلئے تیار بھی ہے لیکن اس نے مارکیٹ تک آسان رسائی اور دیگر ضروری سہولیات کا مطالبہ کیاہے۔پڑوسی ملک کی یہ یقین دہانی اس وقت سامنے آئی جب وزیر خزانہ نرملا سیتارامن نے پارلیمنٹ کو بتایا تھاکہ ہندوستان نے نیپال سے ٹماٹر کی درآمد شروع کر دی ہے جب کہ ملک میں قیمتوں میں ریکارڈ اضافہ ہوا ہے۔بھاری بارشوں کی وجہ سے سپلائی میں خلل کے درمیان تقریباً 242 روپے فی کلو کی بلند خوردہ قیمتوں کی وجہ سے بھارت پہلی بار ٹماٹر درآمد کر رہا ہے۔وزارت زراعت کی ترجمان شبنم شیواکوٹی نے بتایا کہ نیپال ہندوستان کو طویل مدتی بنیادوں پر سبزیاں جیسے ٹماٹر برآمد کرنے کا خواہاں ہے، لیکن اس کے لیے ہندوستان کو اپنی منڈی اور دیگر ضروری سہولیات تک آسان رسائی فراہم کرنی ہوگی۔اگرچہ نیپال نے ایک ہفتہ پہلے ہی سرکاری چینلز کے ذریعے بھارت کو ٹماٹر برآمد کرنا شروع کر دیا ہے، لیکن یہ بڑی مقدار میں نہیں ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ٹماٹروں کی بڑے پیمانے پر برآمد کے لیے انتظامات ابھی باقی ہیں۔کلیماٹی فروٹ اینڈ ویجیٹیبل مارکیٹ ڈیولپمنٹ بورڈ کی ڈپٹی ڈائریکٹر بنایا شریستھا نے کہاکہ اگر ہمیں ہندوستانی منڈی تک آسان رسائی فراہم کی جائے تو نیپال ہندوستان کو بڑی مقدار میں ٹماٹر برآمد کرسکتا ہے۔ہندوستان نیپالی ٹماٹروں کے لیے ایک اچھی منڈی ہے ۔انہوں نے کہا کہ کھٹمنڈو وادی کے تین اضلاع ، کھٹمنڈو، للت پور اور بھکتاپور میں ٹماٹر وافر مقدار میں اگائے جاتے ہیں اور یہ مقامی مانگ کو پورا کرنے کے لیے کافی ہے۔کھٹمنڈو میں اگائے جانے والے کچھ ٹماٹر غیر سرکاری چینلز کے ذریعے ہندوستانی بازار میں برآمد کیے جا رہے ہیں۔

حیدرآباد میں30روپے قیمت
حیدرآباد/یو این آئی/حیدرآباد میں ٹماٹر کی قیمت میں بتدریج کمی آرہی ہے ، حال ہی میں ملک کے کئی حصوں میں ایک کلو ٹماٹر 300 روپے اور تلگوریاستوں میں 200 روپے تک پہنچ گیا تھا، اب باروچی خانہ کی لازمی شئے کی قیمت 30 روپے فی کلو ہوگئی ہے ۔اس کی قیمت میں آئندہ چند دنوں میں مزید کمی کا امکان ہے ۔ اے پی کے مدن پلی کے بازار میں ٹماٹر کی قیمتوں میں زبردست کمی آئی ہے ۔ پہلی قسم کے ٹماٹر کی قیمت مزید گر گئی کیونکہ تقریباً 400 ٹن ٹماٹر مارکٹ میں پہنچ گئے ۔ ٹماٹر 30 تا40روپئے فی کلو کے حساب سے دستیاب ہیں۔ تاجروں کا کہنا ہے کہ آندھراپردیش کے رائلسیما کے اننت پور، چتور، کرناٹک سے بڑی مقدار میں ٹماٹر آنے کی وجہ سے قیمت میں کمی آئی ہے ۔ حیدرآباد کے قریب رنگا ریڈی، وقارآباد اور میدک اضلاع سے بھی ٹماٹر کی بڑی تعداد آرہی ہے جس کے نتیجہ میں ٹماٹر کی قیمت میں کمی ہوئی ہے ۔