ٹرانسفر پالیسی میں شفافیت لائی جائے

ڈوڈہ //جموں و کشمیر ٹیچر فورم نے ٹرانسفر پالیسی میں شفافیت لانے و سی ای او ڈوڈہ کی جانب سے جنرل لائن ٹیچروں کے تبادلہ حکمنامہ کو منسوخ کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔ضلع صدر ٹیچر فورم چوہدری محمد یاسین انقلابی نے زونل صدور کی موجودگی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ رواں سال کے ماہ جنوری میں سیول سکریٹریٹ سے محکمہ تعلیم نے ٹرانسفر پالیسی لاگو کرنے و ٹرانسفر پالیسی 2015 کے تحت تبادلہ مہم کا عمل شروع کرنے کا عندیہ دیا تھا۔ انہوں نے محکمہ تعلیم کے انتظامی سیکرٹری بی کے سنگھ کے اس فیصلے کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا کہ حالیہ دنوں زیڈ ای اوز، لیکچرار و ہیڈماسٹروں کا تبادلہ شفاف طریقے سے عمل میں لایا گیا۔ انہوں نے کہا کہ اے ٹی ڈی 2021 کے تحت ڈوڈہ ضلع میں جنرل لائن ٹیچروں کی عارضی فہرست جاری کی گئی ہے جو کہ نامنظور ہے۔ فورم کے عہدیداروں نے کہا کہ 430 اساتذہ نے تبادلہ کیلئے درخواستیں جمع کی ہیں لیکن صرف 80 ٹیچروں کو اس زمرے میں شامل کیا گیا۔انہوں نے کہا کہ یہ صرف اپنے منظور نظر لوگوں کو من پسند جگہوں پر بھیجنے کا منصوبہ بنایا گیا ہے ۔انہوں نے پرنسپل سیکرٹری و ناظم تعلیم سے ذاتی مداخلت کی اپیل کرتے ہوئے  نئی فہرست ترتیب دینے کی مانگ کرتے ہوئے عدم توجہی پر سڑکوں پر اترنے کی دھمکی دی ہے۔