ولنگٹن ٹیسٹ:جنوبی افریقہ کی پوزیشن مضبوط

ولنگٹن//ٹیم سے مسلسل باہر کئے جانے سے پریشان ڈین ایلگر نے ناٹ آؤٹ 128 کی بہترین سنچری سے اپنی موجودگی ثابت کرتے ہوئے نیوزی لینڈ کے خلاف پہلے ٹسٹ کے پہلے دن بدھ یہاں جنوبی افریقہ کو چار وکٹ پر 229 کے قابل دفاع اسکور تک پہنچا دیا۔جنوبی افریقہ نے ٹاس جیت کر پہلے بلے بازی کا فیصلہ کیا اور دن کے کھیل کے اختتام تک اس نے پہلی اننگز میں 90 اوور میں چار وکٹ کے نقصان پر 229 رنز بنا لئے ہیں اور اس کے اب چھ وکٹ محفوظ ھیں۔ بلے باز ایلگر اپنی ساتویں سنچری مکمل کرنے کے بعد 128 کے اسکور پر ناٹ آؤٹ ہیں اور ان کے ساتھ تیمبا باووما 38 رن بنا کر ناٹ آؤٹ ہیں۔جنوبی افریقہ کی شروعات اچھی نہیں رہی اور اس نے اپنے تین اہم وکٹ محض 22 رن پر گنوا دیے ۔سلامی بلے باز اسٹیفن کک 29 گیندوں میں تین ہی رن بنا سکے تھے کہ ٹرینٹ بولٹ نے انہیں ایل بی ڈبلیو کرکے نیوزی لینڈ کو پہلا وکٹ دلا یا۔ اس کے بعد محض 20 کے اسکور پر مہمان ٹیم کے اسٹار بلے باز ہاشم آملہ صرف ایک رن ہی بنا سکے کہ نیل ویگنر نے انہیں بولڈ کر دیا۔چار گیندوں کے بعد ہی نیوزی لینڈ نے تیسری کامیابی حاصل کر لی اور جے پی ڈومنی ویگنر کی ہی گیند پر راس ٹیلر کے ہاتھوں کیچ ہوگئے .۔ڈومنی صرف دو گیندیں کھیل کر ایک ہی رن بنا پائے تھے ۔ حالانکہ اس کے بعد حالت کو سنبھالتے ہوئے ایلگر اور کپتان فاف ڈو پلیسس اسکور کو 148 تک لے گئے ۔پلیسس نے 118 گیندوں میں سات چوکے لگا کر 52 رن کی نصف سنچری اننگز کھیلی۔پلیسس نے ایلگر کے ساتھ چوتھے وکٹ کے لئے 126 رن کی اہم سنچری شراکت قائم کی۔ جمی نیشام نے پلیسس کو چوتھے بلے باز کے طور پر آؤٹ کر کے اس شراکت کو توڑا۔ ایلگر نے پھر باوما کے ساتھ پانچویں وکٹ کے لیے 81 رن کی ناٹ آوٹ ساجھے داری کی اور دن کا کھیل ختم ہونے تک بغیر کسی اور نقصان کے ٹیم کو 229 کے قابل دفاع اسکور تک لے گئے ۔ نیوزی لینڈ کے لیے ویگنر نے 59 رن پر سب سے زیادہ دو وکٹ لئے ۔ بولٹ نے 44 رن اور نیشام نے 29 رن پر ایک ایک وکٹ نکالا۔(یواین آئی)