وقف بورڑ کی رقوم زیارت گاہوںپر ہی خرچ ہوگی ڈاکٹر درخشاں اندرابی کا پلوامہ میں کئی پروجیکٹوں کا افتتاح اور سنگ بنیاد

عظمیٰ نیوز سروس

پلوامہ// جموں و کشمیر وقف بورڈ کے چیئرپرسن ڈاکٹر سید درخشاں اندرابی نے کل پلوامہ ضلع میں متعدد پروجیکٹوں کا افتتاح کیا اور سنگ بنیاد رکھا۔انہوںنے نیوہ میں نو تعمیر شدہ جامع مسجد کا افتتاح کیا، جس کا سنگ بنیاد چند ماہ قبل ان کے ہاتھوں رکھا گیا تھا۔ یہ جامع مسجد 30 سال بعد تعمیر کی گئی۔انہوںنے کاکا پورہ میں وقف بورڈ کے نئے تعمیر شدہ شاپنگ کمپلیکس کا بھی افتتاح کیا اور کاکا پورہ میں حضرت مہدہ بب رشیؒ کمپلیکس کا سنگ بنیاد بھی رکھا۔بعد ازاں چیئرپرسن وقف بورڈ نے پلوامہ میں کئی عوامی وفود سے ملاقات کی اور ایک عوامی اجتماع سے خطاب میں کہا کہ 2022 سے وقف بورڈ میں ورک کلچر میں زبردست تبدیلی دیکھنے میں آئی ہے جس میں شفافیت، جوابدہی اور عوامی رابطہ گورننس کا نیا نظام ہے۔

 

انہوں نے کہا، ’’ وقف بورڈ کی تاریخ میں پہلی بار بورڈ کے وسائل سے تمام بڑی زیارت گاہوں پر تعمیراتی کام شروع کر رہے ہیں،‘‘ انہوں نے مزید کہا کہ ’’پہلے یہ رقم بعض مراعات یافتہ طبقوں کی جیبوں میں جاتی تھی۔انہوں نے کہا کہ زیارت گاہوں اور وقف بورڈ کی تمام جائیدادوں سے حاصل ہونے والی رقم اب زائرین کو سہولیات فراہم کرنے کے منصوبوں پر خرچ کی جاتی ہے۔انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی کی قیادت میں جموں و کشمیر میں بہت بڑی تبدیلی آئی ہے، اور اسی طرح وقف کے کام کا نظام بہت بدل گیا ہے۔ ‘ ڈاکٹر درخشاں نے کہا’’لوگ اب وقف بورڈ اور اس کے فیصلوں پر بھروسہ کرتے ہیں۔ وہ بورڈ پر یقین رکھتے ہیں اور انہیں ہم سے بہت امیدیں ہیں، اور ہم لوگوں کی امنگوں کو پورا کرنے کے لیے پرعزم ہیں‘‘۔