وزیر اعلیٰ کیخلاف ناشائستہ زبان کا استعمال

جموں//کٹھوعہ پولیس نے گذشتہ روز ایک ریلی کے دوران وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی کے خلاف انتہائی ناشائستہ زبان استعمال کرنے کی پاداش میں بھاجپاکے رکن اسمبلی اورسابق وزیرجنگلات چودھری لال سنگھ کے بھائی چودھری راجندرسنگھ عرف ببی کیخلاف معاملہ درج کرلیاہے۔ڈائریکٹرجنرل آف پولیس ایس پی وید نے ذرائع ابلاغ کوبتایاکہ پولیس نے وزیراعلیٰ کے خلاف انتہائی نازیباالفاظ کے استعمال کانوٹس لیتے ہوئے ایک شخص جوسابق وزیرکابھائی ہے ،کے خلاف ایف آئی آردرج کرنے کافیصلہ لیاہے ۔ڈی جی پی نے کہاکہ میں نے ذاتی طورپرایس ایس پی کوہدایت دی ہے کہ وہ فوری طورپرایف آئی آردرج کرے۔ایس ایس پی کٹھوعہ سری دھرپاٹل نے کشمیرعظمیٰ کوبتایاکہ ہیرانگرپولیس سٹیشن نے وزیراعلیٰ کے خلاف غیرمہذب وناشائستہ زبان استعمال والی ایک ویڈیوسماجی رابطہ سائٹوں پروائرل ہونے کے سلسلے میں ببی کیخلاف زیردفعہ 509 آف آرپی سی اور 66 اور67 آئی ٹی ایکٹ کے تحت معاملہ درج کیاہے۔یہ پوچھے جانے پرکہ ببی کوگرفتارکیاگیاہے توایس ایس پی نے کہاکہ ابھی نہیں ۔ اعلیٰ حکام سے ہدایات ملتے ہی اسے گرفتارکیاجائے گا۔چودھری راجندرسنگھ عرف ببی کی ایک ویڈیو ،جس میں انہوں نے وزیراعلیٰ محبوبہ مفتی کے خلاف غیرمہذب زبان کااستعمال کیاہے، کوسوشل میڈیاسائٹوں پروائرل کیا گیاہے ،اس ویڈیومیں دیکھاجاسکتاہے کہ ببی ایک گاڑی پربیٹھاہواہے اوروزیراعلیٰ کے خلاف ڈوگری زبان میں ناشائستہ الفاظ کااستعمال کررہاہے ۔یہ ویڈیوہیرانگرکٹھوعہ میں نکالی گئی ریلی ڈوگرہ سوابھیمان ریلی کی ہے ۔اتناہی نہیں اس مختصرویڈیومیں ببی کووزیراعظم نریندرمودی اوروزیراعلیٰ کے خلاف انتہائی ناشائستہ الفاظ کہتے ہوئے سناجاسکتاہے۔حزب اختلاف کے لیڈرعمرعبداللہ نے وزیراعلیٰ کے خلاف انتہائی ناشائستہ زبان کے استعمال پرسخت اعتراض جتاتے ہوئے مطالبہ کیاہے کہ سابق وزیرکے بھائی کے خلاف متعلقہ دفعات کے تحت معاملہ درج کیاجائے۔