وزیر اعظم نے جموں کشمیر کے نوجوانوں کیلئے نئے دور کا آغاز کیا سرینگر سے دلی تک جلد ہی ریل چلے گی جس سے کاروباراورسیاحت کو فروغ ملے گا:چُگ

 عظمیٰ نیوزسروس

جموں//بی جے پی کے قومی جنرل سکریٹری اور جموں و کشمیر کے انچارج ترون چْگ نے کہا کہ دفعہ 370کی منسوخی کے بعد جموں کشمیر کیلئے ترقی کے نئے دروازے کھل گئے اور مقامی سیاسی جماعتوںنے اپنے سیاسی مقاصد کیلئے اس آرٹیکل کو ڈھال کے طور پراستعمال کیا تھا ۔ انہوںنے بتایا کہ ان جماعتوںنے جموں کشمیر کے نوجوانوں کا استحصال کیااور انہیں تشدد میں دھکیل دیا لیکن بی جے پی نے کشمیری نوجوانوں کو گلے لگایا اور انہیں جینے کی راہ دکھائی ۔ بی جے پی کے قومی جنرل سکریٹری اور جموں و کشمیر کے انچارج ترون چْگ نے کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی نے جموں و کشمیر میں نوجوانوں کے لیے نئے راستے کھولے ہیں۔

 

ترون چْگ نے کہا کہ دفعہ 370 کی منسوخی کے بعد جموں و کشمیر اگلے درجے پر پہنچ گیا ہے، یہاں کی ترقی کو دیکھ کر خاص طور پر نیشنل کانفرنس بے چین ہے، جو نہیں چاہتی کہ یونین ٹیریٹری کے لوگ خوشحال ہوں اور ترقی کریں۔انہوں نے اپنے دور میں جموں و کشمیر کے نوجوانوں کو دبانے پر این سی پر شدید حملہ کیا اور کہا کہ جب عبداللہ خاندان جموں و کشمیر پر حکومت کر رہا تھا تو انہوں نے سب سے پہلے نوجوانوں کو دبایا اور انہیں جھوٹے مقدمات میں پھنسایا جس کی وجہ سے مین اسٹریم انڈیا کی طرف ان میں غصہ پیدا ہوا۔ انہوںنے مزید کہا کہ ’’گپکار گینگ ‘‘نے جموں و کشمیر کے نوجوانوں کو تشدد کی طرف دھکیل دیا اور انہیں پرتشدد طریقوں کا سہارا لینے پر مجبور کیا۔ترون چْگ نے کہا کہ بی جے پی نے جموں و کشمیر کے نوجوانوں کو گلے لگایا ہے اور ایک بہتر مستقبل اور قوم کی تعمیر کی طرف رہنمائی کی ہے۔ترون چْگ نے کہا کہ عبداللہ خاندان نے ہمیشہ اپنی بداعمالیوں کو چھپانے کے لیے دفعہ 370 کو ڈھال کے طور پر استعمال کیا، لیکن بی جے پی نے 5 اگست 2019 کے بعد اس قانون کو ختم کر دیا۔ جموں و کشمیر امن، خوشحالی اور ترقی کا گڑھ ہے۔ بنایا جا چکا ہے۔ترون چْگ نے کہا کہ پی ایم نریندر مودی نے جموں و کشمیر کے لوگوں کے لیے 32,000 کروڑ روپے کے پروجیکٹوں کا آغاز کیا۔بی جے پی مرکز کے زیر انتظام علاقے کو امن اور ترقی کی نئی بلندیوں پر لے جانے کے لیے پرعزم ہے۔انہوںنے بتایا کہ جلد ہی سرینگر سے دلی تک براہ راست ریل شروع ہوجائے گی جس سے نہ صرف کاروباری سرگرمیاںبڑھیں گی بلکہ سیاحت کو بھی فروغ ملے گا۔