ورلڈ الیون کے کھلاڑی پاکستان آنے سے قبل دبئی میں جمع ہونا شروع

کراچی/پاکستانی شائقینِ کرکٹ کی طرح ورلڈ الیون ٹیم میں شامل کھلاڑی بھی پرجوش ہیں جو دورہ پاکستان سے قبل پریکٹس کے لئے دبئی پہنچنا شروع ہوگئے۔جنوبی افریقا کے کپتان فاف ڈپلوسی کی قیادت میں ورلڈ الیون ٹیم 11 ستمبر کو پاکستان پہنچے گی تاہم اس سے قبل ٹیم دبئی میں لگائے جانے والے کیمپ میں پریکٹس کرے گی جس کے لئے کھلاڑی پہنچنا شروع ہوگئے۔آسٹریلوی کرکٹر بین کٹنگ نے دبئی پہنچنے پر پاکستانی شائقین کو سلام بھیجا اور کہا کہ دبئی میں دو روزہ ٹریننگ سیشن کے بعد پاکستان آرہا ہوں۔بین کٹنگ نے پاکستانی شائقین کو کہا کہ وہ تیار ہوجائیں ان سے پاکستان کے میدان میں ملاقات ہوگی۔سری لنکن آل راؤنڈر تھسارا پریرا نے بھی دبئی میں ورلڈ الیون کرکٹ ٹیم کا کیمپ جوائن کرلیا جن کا کہنا ہے کہ وہ ورلڈ الیون ٹیم کا حصہ بننے پر خوش اور پاکستان میں کرکٹ کھیلنے کے لئے پرجوش ہیں۔ خیال رہے کہ جنوبی افریقا کے کپتان فاف ڈپلوسی کی قیادت میں ورلڈ الیون ٹیم 14 کھلاڑیوں پر مشتمل ہے جو 11 ستمبر کو پاکستان پہنچے گی۔مہمان ٹیم میں ہاشم آملہ، عمران طاہر، مورنی مورکل، ڈیوڈ ملر، جارج بیلی، ٹم پین، سیموئل بدری، بین کٹنگ، پال کولنگ وڈ، گرینٹ ایلیٹ، تمیم اقبال اور تھسارا پریرا پر شامل ہیں۔دوسری جانب پاکستان کرکٹ بورڈ نے ورلڈ الیون اور پاکستان کرکٹ ٹیم کے درمیان ٹی 20 آزادی کپ کیلئے امپائرز کا اعلان کر دیا ہے۔12 ستمبر کو پہلے میچ میں آئی سی سی ایلیٹ پینل میں شامل پاکستانی امپائر علیم ڈار، آئی سی سی پینل کے پاکستانی امپائر احسن رضا فیلڈ امپائرز، انٹرنیشنل پینل میں شامل شوذب رضا تھرڈ جبکہ احمد شہاب فورتھ امپائر ہوں گے۔ علیم ڈار دبئی میں آئی سی سی میچ آفیشلز ورکشاپ میں شرکت کے باعث ایک میچ میں ہی امپائرنگ کریں گے۔13 ستمبر کو ہونے والے دوسرے میچ میں احمد شہاب اور شوذب رضا فیلڈ امپائرز، احسن رضا تھرڈ امپائر جبکہ آصف یعقوب فورتھ امپائر ہوں گے۔ 15 ستمبر کو ہونے والے تیسرے اور آخری میچ میں احسن رضا اور شوذب رضا فیلڈ امپائرنگ کریں گے، احمد شہاب تھرڈ اور خالد محمود سینئر فورتھ امپائر ہوں گے۔ آئی سی سی کی جانب سے سیریز کیلیے سر رچی رچرڈسن کو میچ ریفری تعینات کیا جا چکا ہے جو تینوں میچز میں اپنے فرائض انجام دیں گے۔