وجے دیوس کے موقعہ پرتقریب | کرگل جیسی جنگ میں فتح حاصل کرناانتہائی مشکل کام :بپن راوت

 سرینگر// دراس لداخ میںکرگل وجے دیوس کی 22 ویں سالگرہ کی تقریبات کا انعقاد کیا گیاجس میں آپریشن وجے کے حوالے سے فوج کی بہادری کی کہانیاں بیان کی گئی اور انہیں خراج عقیدت پیش کیا گیا۔ چیف آف ڈیفنس سٹاف جنرل بپن راوت نے کرگل دیوس کو تاریخی اہمیت کا حامل قرار دیتے ہوئے کہا کہ ایسے مشکل حالات میں فتح حاصل کرنا انتہائی مشکل کام ہوتا ہے۔ سی این ایس کے مطابق اس یہ تقریبات کرگل وار میموریل میں منعقد کی گئیں۔ اس موقعہ پرجنگ کے دوران ٹائیگر ہل اور دیگر واقعات پر بھی روشنی ڈالی گئی۔ اس موقع پر لداخ یونین ٹریٹری کے لیفٹیننٹ گورنر آر کے ماتھر مہمان خصوصی تھے جنہوں نے وار میموریل پر پھول مالا چڑھائی ۔اس خصوصی تقریب پر کارگل جنگ کے ہیروز اور اْن کے کنبے کے مزید دیگر فوجی اہلکار بھی موجود تھے۔ جنگ کی کہانی سن کر وہاں موجود سامعین کی آنکھیں نم ہو گئی آخر میں تقریبات کو کرگل وار میموریل منتقل کیا گیا جہاں ملٹری بینڈ نے اپنا نمونہ پیش کیا۔ جس کے بعد بیٹنگ دی ریٹریت تقریب ہوئی جس کے دوران وہاں موجود افراد نے جنگ کے دوران ہلاک ہوئے فوجیوں کو خاموش خراج تحسین پیش کیا۔ اس موقع پر مزید 559 لیمپ بھی جلائے گئے۔ آخری تقریب میں موسیقار امان چندر نے شام کے موقع پر اپنی موسیقی کی دھنوں سے سامعین کا دل جیت لیا۔ اس کے بعد مارے گئے فوجیوں کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے فوج کے بینڈ نے پرفارم کیا۔ اور پھر آخر میں کیپٹن وکرم بترا کی بائیوپک، ’شیرشاہ‘ کا ٹریلر بھی ریلیز کیا گیا اور ناردرن کمانڈ کے ذریعہ تیار کردہ ایک نغمہ ما تیری قسمبھی پیش کیا گیا۔اس تقریب میںلیفٹیننٹ گورنر آر کے ما تھورمہمان خصوصی نے چادر چڑھائی۔ چیف آف ڈیفنس سٹاف جنرل بپن راوت نے کرگل دیوس کو تاریخی اہمیت کا حامل قرار دیتے ہوئے کہا کہ ایسے مشکل حالات میں فتح حاصل کرنا انتہائی مشکل کام ہوتا ہے۔انہوں نے کہا کہ ان شہیدوں کو ہر پل یاد کیا جاتا ہے جنہوں نے ملک کے دفاع کے لئے اپنی جانیں نچھاور کیں۔ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ لداخ یونین ٹریٹری میں ترقیاتی کام اچھی طرح سے ہو رہے ہیں۔