وادی میں پی ڈی پی اب نئی علیحدگی پسند جماعت کی شکل اختیار کررہی ہے: بھاجپا

سرینگر//بھارتیہ جنتا پارٹی نے پی ڈی پی پر سنگین الزامات عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ پی ڈی پی وادی کشمیر میں ایک نئی علیٰحدگی پسند جماعت کی شکل اختیار کررہی ہے اور پی ڈی پی صدر محبوبہ مفتی سید علی گیلانی بننے کا کوئی راستہ نہیں چھوڑتی ۔ سی این آئی کے مطابق بھارتیہ جنتا پارٹی کے جنرل سیکریٹری اور کشمیر انچارج وبودھ گپتا نے محبوبہ مفتی اور پی ڈی پر الزام لگاتے ہوئے کہا ہے کہ پارٹی اب وادی کشمیر میں ایک نئی علیٰحدگی پسند جماعت کی شکل اختیار کررہی ہے ۔ وبودھ گپتا نے کہا کہ پی ڈی پی وادی میں دوسری علیحدگی پسند بننے کی کوشش کررہی ہے ۔بی جے پی کے وسیم باری کی برسی پر بولتے ہوئے کہا انہوںنے کہا کہ محبوبہ مفتی ایسا کوئی موقع نہیں گنواتی جس سے اس کا کام سید علی گیلانی جیسا ہو ۔ انہوںنے کہا کہ لوگوں کے دلوں میں جگہ بنانے کی خاطر پی ڈی پی اب جھوٹ کا سہارا لے رہی ہے ۔انہوں نے کہا کہ پی ڈی پی ہر گزرتے دن کے ساتھ غائب ہو رہی ہے کیونکہ یہ جھوٹ پر مبنی جماعت ہے اور انہوں نے ہمیشہ لوگوں سے جھوٹ بولا ہے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ بی جے پی کارکنوںپر کشمیر میں جان بوجھ کر حملہ کیا جارہا ہے کیونکہ انہوں نے ہمیشہ علیحدگی پسند رہنماؤں کے منصوبوں کو ناکام بنایا ہے ، اور یہی وجہ ہے کہ وہ چاہتے ہیں کہ ان کے کارکنوں اور رہنماؤں کو زیادہ سے زیادہ حفاظتی احاطہ حاصل ہو۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ بی جے پی پارٹی نے وسیم باری کے اہل خانہ کی حمایت کی ہے جب سے وہ اپنے والد اور چھوٹے بھائی کے ساتھ مارے گئے تھے۔