نیشنل کانفرنس ہی عوام کو موجودہ دلدل سے نکال سکتی ہے : ساگر

سرینگر// پی ڈی پی بھاجپا حکومت کے قیام سے لیکر آج تک کشمیر میں چہار سو غیر یقینیت، بے چینی، ظلم وتشدد اور انسانی حقوق کی پامالیاں جاری ہیںاور نیشنل کانفرنس واحد ایسی سیاسی نمائندہ جماعت ہے جو عوام کو اس دلدل سے نکال سکتی ہے۔ان باتوں کا اظہار نیشنل کانفرنس جنرل سکریٹری علی محمد ساگر نے پارٹی ہیڈکوارٹر پر ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ یہ تقریب زڈی بل کے سرگرم سیاسی شخصیات کی نیشنل کانفرنس میں شمولیت کے سلسلے میں منعقد کی گئی تھی۔ سابق ایم ایل اے زڈی بل کے قریبی ساتھی اور زون صدر حکیم غلام محمد اور زون آرگنائزر غلام حسین مغلو کی قیادت میں 3درجن عہدیداروں اور کارکنوں نے نیشنل کانفرنس میں شمولیت اختیار کی۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے علی محمد ساگر نے کہا کہ انشاء اللہ عوام کے اشتراک نیشنل کانفرنس پھر ایک کشمیری قوم کیلئے نجات دہندہ جماعت ثابت ہوگی۔ پارٹی میں شمولیت اختیار کرنے والوں نے نیشنل کانفرنس میں شامل ہونے کو گھر واپسی قرار دیتے ہوئے کہا کہ یہ واحد ایسی عوامی نمائندہ جماعت ہے جس نے ہمیشہ عوامی اور ریاستی مفادات کی پاسبانی کی۔ انہوں نے کہا کہ حقیر مفادات کیلئے دل بدلی کرنا اور بھاجپا کے ساتھ بغلگیر ہونے والے کشمیریوں کے نمائندے نہیں ہوسکتے۔ آخر پر پارٹی صدر ڈاکٹر فاروق عبداللہ اور نائب صدر عمر عبداللہ نے بھی پارٹی میںشمولیت اختیار کرنے والوں کا خیر مقدم کیا اور انہیں پارٹی کی مضبوطی اور عوام کے ساتھ قریبی رابطہ رکھ کر اُن کے مسائل و مشکلات اُجاگر کرنے کی تاکید کی۔