نیشنل کانفرنس لیڈرشیخ نذیر کو ساتویں برسی پرخراج عقیدت

سرینگر//نیشنل کانفرنس لیڈر شیخ نذیر احمدکی ساتویں برسی کے موقع پر پارٹی صدر ڈاکٹر فاروق عبداللہ نے انہیں خراج عقیدت کے پیغام میں کہا ہے کہ نیشنل کانفرنس اپنے کشمیر کے اس عظیم سپوت کی کمی محسوس کررہا ہے، گذشتہ 7سال میں ایسا کوئی دن نہیں گزرا ہوگا جب نیشنل کانفرنس کے جلسوں، جلسوں، تقریبات، کنونشنوں اور میٹنگوں میں نذیر صاحب کا ذکر نہ کیا گیا ہو۔ انہوں نے کہا کہ جدید تاریخ کشمیر میں نیشنل کانفرنس کے مرحوم لیڈر شیخ نذیر احمد کا نام ہمیشہ سنہرے حروف میں لکھا جائے گا۔ انہوں نے دہائیوں تک نیشنل کانفرنس کی آبیاری کی اور مرحوم شیخ محمد عبداللہ کے سنہرے اصولوں اور فیصلوں پر کبھی سمجھوتہ نہیں کیا۔ پارٹی کے نائب صدر عمر عبداللہ نے مرحوم شیخ نذیر احمد کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہا کہ مرحوم نذیرمرحوم شیخ محمد عبداللہ کے قابل اعتماد اور قابل بھروسہ فرزند تھے۔مرحوم کو اللہ نے دور اندیشی، سیاسی سوجھ بوجھ اور قانونی مہارت عطا کی تھی ۔پارٹی کے معاون جنرل سکریٹری ڈاکٹر شیخ مصطفی کمال ، صوبائی صدود ناصر اسلم وانی ،ایڈوکیٹ رتن لعل گپتا، اراکین پارلیمان ایڈوکیٹ محمد اکبر لون، جسٹس (ر) حسنین مسعودی، سینئر لیڈران عبدالرحیم راتھر، محمد شفیع اوڑی، چودھری محمد رمضان، شریف الدین شارق، پیرزادہ احمد شاہ، محمد اکبر لون، میاں الطاف احمد، آغا سید روح اللہ مہدی، قمر علی آخون، کفیل الرحمن، میر سیف اللہ، قیصر جمشید لون، شمیمہ فردوس، سکینہ ایتو، خالد نجیب سہروردی، سجاد احمد کچلو، علی محمد ڈار، ایڈوکٹ عبدالمجید لارمی، الطاف احمد کلو، عرفان احمد شاہ، غلام قادری پردیسی، تنویر صادق، سلمان علی ساگر، عمران نبی ڈار، پیر آفاق احمد، اعجاز جان، حاجی حنیفہ جان، ایڈوکیٹ شوکت احمد میر ، شیخ محمد رفیع ،غلام محی الدین میر، سلام الدین بجاڑ، نے بھی مرحوم لیڈر کو زبردست الفاظ میں خراج عقیدت پیش کیا۔ یاد رہے شیخ نذیر احمد کی برسی آج یعنی 24فروری کو منائی جارہی ہے۔