نپاھ وائرس سے کیرالہ میں خوف کا ماحول برقرار، مرنے والوں کی تعداد12ہوگئی

 کوجھی کوڈ//شمالی کیرالا میں نپاہ وائرس کے انفیکشن سے اب تک12 افراد مر چکے ہیں۔اسپتال کے ذرائع کے مطابق چاندرگاروتھ گاؤں کے رہنے والے 62 سالہ ویلینچے کٹی موسی کی   موت گئی۔قبل ازیں کوجھی کوڈ اور ملپورم کے اضلاع میں 11 افراد ہلاک ہوئے تھے ۔ جن میں موسی کے دو بیٹوں ثابت اورصالح سمیت خاندان کے تین لوگ شامل تھے ۔ محکمہ صحت کے ذرائع کے مطابق کوجھی کوڈ میڈیکل کالج میں داخل 8لوگوں کی حالت پر گہری نظررکھی جارہی ہے ۔علاقے میں حالات کی سنجیدگی کو دیکھتے ہوئے ہیلتھ ڈیپارٹمنٹ نے سیاحوں کو کیرالا کے شمال اضلاع میں جانے پرپابندی عائدکرتے ہوئے وارننگ جاری کی ہے ۔ہیلتھ ڈپارٹمنٹ کے سیکرٹری راجیو سدانندن کے مطابق ریاست کے کسی بھی حصے پر سفر پرجانامحفوظ ہے ۔ لیکن سیاحوں کو ملپورم، کوجھی کوڈ، ویناڈاد اور کنور کا سفر کرتے وقت اضافی نگرانی کرنے کی ضرورت زوردیا۔بہتر یہی ہے کہ فی الحال ان اضلاع میں سفرملتوی کردیاجائے ۔ریاستی وزیر صحت کے کے شیلجانے بتایا کہ ریاستی حکومت نے کوجھی کوڈ میں جمعہ کو آل پارٹی اجلاس بلایا ہے ۔اجلاس میں موجودہ صورتحال پر سنجیدگی سے بات چیت ہوگی۔یواین آئی۔