نوہٹہ میں تشدد بھڑک اُٹھا | نوجوانوں اور فورسزکے مابین جھرپیں

سرینگر// پائین شہر کے نوہٹہ علاقے میں جمعہ کو فورسز اور نوجوانوں کے درمیان پرتشدد جھڑپوں میں سنگبازی،ٹیر گیس شلنگ اور پیلٹ بندوق کے استعمال سے 6 نوجوان  پیلٹ لگنے سے مضروب ہوئے۔ جامع مسجد سرینگر کے گردنواح علاقوں میں نماز جمعہ کی ادائیگی کے ساتھ ہی فورسز اور نوجوانوں کے درمیان جھڑپیں ہوئیں۔عینی شاہدین کے طابق جامع مسجد سرینگرمیں نماز جمعہ کے بعد نوجوانوں کی ایک خاصی تعداد جمع ہوئی اور احتجاجی مارچ نکالنے کی کوشش کی ،تاہم پولیس نے انہیں منتشر ہونے کی ہدایت دی۔عینی شاہدین کے مطابق پولیس و فورسزاہلکاروں نے نوجوانوںکا تعاقب کیا۔اس دوران نوجوانوں مشتعل ہوئے اورانہوں نے پولیس و فورسز پر پتھرائو کیا۔پولیس وفورسزاہلکاروں نے سنگباری کرنے والے مشتعل نوجوانوں کو تتربتر کرنے کیلئے ٹیر گیس شلنگ کے ساتھ ساتھ مبینہ طور پیلٹ فائرنگ بھی کی ،جسکے نتیجے میں کم ازکم  6 نوجوانوںکے زخمی ہونے کی اطلاع ہے،جنہیں اسپتال پہنچایا گیا۔اس صورتحال کے بعدنوہٹہ اوراسکے نزدیکی بازاربندہوگئے اوریہاں معمول کی تجارتی ،کاروباری اور دیگر سرگرمیاں متاثر ہوئیں۔ اس سے قبل پولیس وفورسز کی بھاری نفری کو جامع مسجد سرینگر کے گرد ونواح میں نماز جمعہ سے قبل ہی احتیاطی اقدامات کے تحت تعینات کیا گیا تھا۔ علاقے میں نوجوانوں اور فورسز کے درمیان جھڑپوں کے بعد دیگر حساس علاقوں میں بھی فورسز اور پولیس اہلکاروں کی تعداد کو نہ صرف بڑھا دیا گیابلکہ انہیں متحرک بھی کیا گیااوراہلکاروں کو ہدایت دی گئی کہ کسی بھی طرح کی صورتحال سے نپٹنے کیلئے تیار رہیں۔