نوگام تصادم آرائی| پتھراؤ کے الزام میں متعدد نوجوان گرفتار:پولیس

سری نگر//پولیس نے سری نگر کے نوگام میں بدھ کے روز سیکورٹی فورسز اور جنگجوؤں کے درمیان ہونے والی تصادم آرائی کے بعد سیکورٹی اہلکاروں پرپتھراؤ کرنے میں ملوث پندرہ افراد کو گرفتار کیا ہے۔
 
ایک پولیس ترجمان نے جمعرات کو اپنے ایک بیان میں کہا کہ شنکر پورہ نوگام میں 16 مارچ کو لشکر طیبہ کی ذیلی تنظیم ٹی آر ایف کے تین جنگجوؤں کو مارا گیا۔
 
بیان میں کہا گیا: ’معیاری آپریشن طریقہ کار (ایس او پی) کے تحت شہریوں کے تحفظ کو یقینی بنانے کے لئے جائے تصادم کو صاف کیا جا رہا تھا اور اس دوران اس جگہ کے ارد گرد سائن بورڈس بھی لگا دئے تھے تاکہ لوگوں کو صفائی سے پہلے اس جگہ کی طرف آنے سے روکا جاسکے‘۔
 
موصوف ترجمان نے بیان میں کہا: ’تاہم شنکر پورہ کے ملحقہ علاقوں سے تعلق رکھنے والا ایک بڑا ہجوم ہاتھوں میں لاٹھیاں اور پتھر لئے جمع ہوا اور اس ہجوم نے وہاں تعینات سیکورٹی اہلکاروں پر پتھراؤ کیا
 
انہوں نے کہا کہ ہجوم کو تتر بتر کرنے کے لئے ایس او پیز کے مطابق دھوئیں کے گولوں کا استعمال کیا گیا۔
 
پولیس بیان میں کہا گیا کہ اس ضمن میں پولیس اسٹیشن نوگام میں ایک کیس درج کیا گیا اور پندرہ افراد کی گرفتاری عمل میں لائی گئی۔
 
بیان میں لوگوں سے جائے تصادم آرائیوں کے نزدیک جانے سے پرہیز کرنے کی اپیل کی گئی۔