نعت

 میں رکھتا ہوں دل میں ولائے محمدؐ
مری جاں فدا ہے برائے محمدؐ
نہیں کچھ ہے دل میں سوائے محمدؐ
یہ حق جانتا ہے خدائے محمدؐ
حسیں خواب آیا تھا کل رات مجھ کو
محبت سے چُومے تھے پائے محمدؐ
وہ دل باغِ جنت سے کچھ کم نہیںہے
کہ لاریب جس میں سمائے محمدؐ
وفا کی قسم یہ وفا کہہ رہی ہے
وفا بس وفا ہے وفائے محمدؐ
یہ الفاظ اور یہ شعورِ سخن بھی
فقط باخدا ہے عطائے محمدؐ
کلامِ الہی پڑھا تو یہ سمجھا
بقا دین کی ہے بقائے محمدؐ
محبت کی دنیا میں شادابؔ ہر دم
یوں ہی کرتے رہنا ثنائے محمدؐ
 
محمدشفیع شادابؔ
پازل پورہ شالیمارسرینگر کشمیر
رابطہ؛ 9797103435