نرمل نے سالانہ بھماگ کیسری دنگل کاخطاب جیت لیا

 ادہم پور //ماسٹر چندگی رام دہلی اکھاڑہ کے پہلوان نرمل نے بسنت گڑھ کے مصطفی کمال کو ہرا کر بھماگ کیسری خطاب 2018اپنے نام کر لیا ۔جموں کشمیر انڈین سٹائل ریسلنگ ایسو سی ایشن نے جموں کشمیر پولیس محکمہ سیاحت جے کے بنک منروگی اور بھماگ دنگل کمیٹی کی وساطت سے ادہمپور میں کشتی کا اہتمام کیا ۔اس دوران وزیر خزانہ ، امور صارفین و تقسیم کاری اجے نندا مہمان خصوصی کے طور پر موجود تھے ۔اس تاریخی دنگل میں کل 25کشتیاں لڑی گئیں۔ایک دنگل میں فاتح رہنے والے پہلوان کو کمیٹی کی طرف سے 5000ہزارکے نقدی انعام کے ساتھ ساتھ دستور کے مطابق گرج اور پٹا بھی دیا گیا جبکہ آخری مقام تک پہنچنے والے پہلوان ببلوکو 3000ہزارکا نقدی انعام دیا گیا۔یہاں دوسری بڑی سلمان بنام نتیش ہوئی ۔سلمان جن کا تعلق چوپڑہ شاپ سے ہے دہلی کے نتیش کو ہرا کر انہوں نے ریاست کا نام کشتی کے میدان میں اونچا کر دیااور اس کے بعد اسی طرح کی ایک اور کشتی ہوئی جس میں بجالتہ سے تعلق رکھنے والے وجے نے دہلی اکھاڑے کے گووندہ کو گرا کر اپنے آپ کو کشتی کی رینکنگ میں آگے لایا۔اس دوران بھماگ کیسری دنگل کمیٹی کے جن ممبران اورجن دیگر لوگوںنے اس  دنگل کا انعقاد کرنے میں کمیٹی کی مدد کی ان میں سے ایڈوکیٹ سوانتنتر دیو کوتوال ،ہنس راج ٹھاکر ،جگدیش چندر،اوم پرکاش ورما،وریندر بھدیال ،تولیندر کمار اور لکشمن داس کٹوچ کا نام قابل ذکر ہے۔ان کے علاوہ میلہ آفیسر تحصیل دار منگوری ایمت کمار،ہمت سنگھ،بی ڈی او،جموں کشمیر بنک کے منیجر اور سینیر سٹیزن ویلفئر فورم کے صدر ،وغیرہ معززیں اس موقع پر موجود تھے۔