نابینالڑکیوں کے اسکول کیلئے اراضی کامعاملہ

سرینگر// حکومت نے عدالتی احکامات پر نابینا لڑکیوں کے ایک مخصوص اسکول کو انتظامیہ کی جانب سے اراضی تفویض کرنے میں اعتراض کے معاملے میں چیف سیکریٹری کی صدارت میں5 رکنی کمیٹی کی تشکیل کو ہری جھنڈی دکھائی۔ جموں کے روپ نگر میں واقع بینائی سے محروم لڑکیوں کے ایک اسکول’ ’لوئس بریل میموریل اسکول فار سائٹ لیس گرلز‘‘ نے مدرسے کی توسیع کیلئے سرکار سے اراضی کی درخواست کی تھی،جس پر انتظامیہ نے یہ کہہ کر اراضی فراہم نہیں کی کہ یہ علاقہ گرین ائریا ہے اور یہاں تعمیرات کھڑا کرنے کی اجازت نہیں، جبکہ اسکول کے اوپر سے ہائی ٹینشن ترسیلی لائن بھی گزرتی ہے۔ اسکول نے بعد میں ہائی کورٹ کا دورازہ کھٹکھٹایا اور عدالت نے اس سلسلے میں ایک اعلیٰ سطحی کمیٹی کو تشکیل دینے کی ہدایت دی۔اس حوالے سے حکومت نے منگل کو ایک کمیٹی تشکیل دی جس کی کمان جموں کشمیر کے چیف سیکریٹری کو سونپی گئی۔ سرکاری حکم نامہ میں کہا گیا کہ اس5رکنی کمیٹی میں فائنانشل کمشنر(ایڈیشنل چیف سیکریٹری) محکمہ خزانہ ،محکمہ تعلیم کے پرنسپل سیکریٹری، محکمہ سماجی بہبود کے انتظامی سیکریٹری اور وائس چیئرمین جموں ڈیولپمنٹ اتھارٹی ممبران ہوں گے۔