مینڈھر ۔ڈھرانہ رابطہ سڑ ک کا حفاظتی بند منہدم

 مینڈھر //مینڈھر سے ڈھرانہ جارہی رابطہ سڑک کا حفاظتی باندھ منہدم ہو نا شروع ہو گیا ہے تاہم محکمہ گریف کی جانب سے اس کی مرمت کی جانب کوئی دھیان ہی نہیں دیاجارہا ہے ۔مقامی لوگوں نے بتایا کہ مذکورہ سڑک کی مدد سے گور نمنٹ ڈگری کالج مینڈھر اور گور نمنٹ ہائر سکینڈری سکول مینڈھر میں زیر تعلیم بچوں کی ایک بڑی تعداد گزرتی ہے ۔انہوںنے محکمہ گریف کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ سڑک کےساتھ ساتھ حفاظتی دیوار کی تعمیر انتہائی غیر معیاری کی گئی تھی جس کی وجہ سے کچھ ہی مدت میں پل کے ایک حصے کی حفاظتی دیوار گرنا شروع ہوگئی ہے ۔انہوں نے کہا کہ سڑک کو معیاری بنانے کےلئے متعلقہ حکام سے کئی مرتبہ رابطہ کیا گیا تاکہ کالج کےساتھ ساتھ عام لوگوں کی دوران آمد ورفت کسی مشکل کا سامنا نہ کرنا پڑے لیکن ابھی تک کوئی عملی کام نہیں کیا گیا ۔انہوں نے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ بچوں کے راستے کو بحال رکھنے کےلئے مذکورہ حفاظتی دیوار کو جلدازجلد مرمت کیا جائے جبکہ متعلقہ محکمہ کے غیر سنجیدہ ملازمین و آفیسران کےخلاف کارروائی عمل میں لائی جائے ۔
 
 
 

حیات پور رابطہ سڑک کی خستہ حالی 

مقامی لوگوں کو شدید مشکلات کا سامنا 

پرویز خان
منجا کوٹ //تحصیل منجا کوٹ کی حیات پورہ تا سکھہ کس رابطہ سڑک انتہائی خستہ ہونے کی وجہ سے مقامی لوگوں کو دوران آمد ورفت شدید مشکلات کاسا مناکرناپڑرہاہے ۔مکینوں نے بتایا کہ متعلقہ محکمہ کی جانب سے رابطہ سڑک کو مکمل ہی نہیں کیا جارہا ہے جس کی وجہ سے جہاں ان کو دوران آمد ورفت بنیادی سہولیات میسر نہیں ہیں وہائیں سڑک کے ملحقہ علاقوں میں آنے والی زمینیں و رہائشی مکانات بھی تباہ ہو رہے ہیں ۔مقامی معززین نے بتایا کہ محکمہ پی ڈبلیو ڈی کی جانب سے 10برس قبل رابطہ سڑک کی تعمیر کا عمل شروع کیا گیا تھا لیکن محکمہ کی لاپرواہی کی وجہ سے کئی برسوں بعد بھی رابطہ سڑک کی حالت جوں کی توں ہی ہے ۔انہوں نے بتایا کہ سڑک کی تعمیر کےلئے ٹینڈر کیا گیا تھا لیکن ابھی تک اس پر تعمیر ای کام شروع نہیں کیاجاسکا ہے ۔مقامی لوگوں نے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ رابطہ سڑک کو جلدازجلد مکمل کیاجائے تاکہ ان کو دوران آمد ورفت مسائل کا سامنا نہ کرناپڑے ۔
 

 

 

سرنکوٹ میں رابطہ سڑکیں کھڈوں میں تبدیل 

مسافر دھول سے پریشان ،مرمتی کا مطالبہ 

بختیار کاظمی
سرنکوٹ//سرنکوٹ سب ڈویژن کے مختلف علاقوں میں جانے والی رابطہ سڑکیں انتہائی خستہ ہونے کی وجہ سے مکینوں کو شدید مشکلات درپیش ہیں ۔مقامی لوگوں نے تعمیر اتی ایجنسیوں کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ رابطہ سڑکیں کھڈوں میں تبدیل ہو گئی ہیں جبکہ دھول اور کھڈوں میں وجہ سے مسافروں و ملحقہ علاقوں میں رہائش پذیر لوگوں کی مشکلات میں اضافہ ہوتا جارہا ہے ۔انہوں نے بتایا کہ محکمہ تعمیر ات عامہ ،پی ایم جی ایس وائی و دیگر تعمیر اتی ایجنسیوں کی جانب سے کئی رابطہ سڑکیں تعمیر کی جارہی ہیں لیکن ان سڑکوں کو گزشتہ کئی عرصہ سے مکمل ہی نہیں کی جارہی ہیں ۔بلاک بفلیاز پوشانہ درابہ بفلیاز پھاگلہ منڈی سی ار ایف روڈسنئی دھندک مڑہوٹ کے علاوہ کئی سڑکیں اس وقت کھڈوں میں بدل گئی ہیں اور دھول آسمان چھو رہی ہے ۔انہوں نے کہاکہ نالیوں کا نام نشاں تک موجود نہیں ہے۔ اسطرح بلاک سرنکوٹ کی متعدد سڑکیںبھی مکینوں کےلئے مصیبت بن گئی ہیں ۔مقامی لوگوں نے ضلع انتظامیہ کےساتھ ساتھ جموں وکشمیر کے لیفٹیننٹ گورنر سے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ رابطہ سڑکوں کو قابل آمد ورفت بنایا جائے تاکہ ان کی مشکلات کم ہو سکیں ۔
 
 

جموں پونچھ شاہراہ بھینچ کالونی کے مقام سے خستہ

حسین محتشم
پونچھ//جموں پونچھ شاہراہ بھینچ کالونی کے مقام انتہائی خستہ ہونے سے مقامی آبادی میں غم و غصہ پایا جارہا ہے۔ سڑک کی حالت خستہ ہونے کے نتیجے میں لوگوں کو عبور و مرور میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے جبکہ یہاں سے گزرنے والی ہزاروں گاڑوں میں سفر کرنے والے مسافر بھی متاثر ہوتے ہیں اور گاڑیوں کا بھی نقصان ہو جاتا ہے۔بھینچ کے ایک شہری وکاس شرما نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ اس سڑک کی سالوں سے یہی حالت ہے بارہا انتظامیہ کی توجہ مبذول کروانے کے باوجود سڑک پرنہ ہی میکڈم بچھایا گیا اور نہ کبھی مرمت کی گئی۔انھوں نے کہا کہ پونچھ جموں قومی شاہراہ پر اس مقام سے گزرنے والے سکولی بچوں، بزرگوں اور عورتوںکو کئی دقتوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے کیونکہ سڑک پر بنے ہوئے کھڈوںمیں جمع پانی اور مٹی گاڑیوں کے چلنے ک ےوقت وہاں سے گارے کی شکل اختیار کر کے بچوں اور بزرگوں کے کپڑے خراب کر دیتی ہے یا پھر وہاں دکانوں کے اندر داخل ہو کر وہاں موجود قیمتی سامان کو نقصان پہنچاتی ہے ۔لوگوں نے ضلع انتظامیہ سے مطالبہ کیا ہے کہ کالونی بھینچ کے مقام پر خستہ حال قومی شاہرا کی مرمت کی جائے اور اس کو میکڈمائز کیاجائے۔ انھوں نے کہا کہ اگر فوری سڑک کی مرمت کر کے اس پر تار کول نہ بچھائی گئی تو لوگ احتجاج کرنے پر مجبور ہو جائیں گے۔