مینڈھر کے دیہات میں پانی کی بحرانی کیفیت

مینڈھر//مینڈھر سب ڈویژن میں اکثر واٹر سپلائی سکیمیں غیر فعال ہو نے کی وجہ سے عام لوگوں کو پینے کے صاف پانی کی شدید قلت کا سامنا کرناپڑرہا ہے ۔مکینوں نے کہاکہ مینڈھر میں آبی وسائل /چشمے وغیرہ کم ہیں، اس لئے یہاں پر پانی کی سپلائی کے لئے کئی لفٹ اسکیمیں قائم کی گئی ہیں جن پرکروڑوں روپے خزانہ عامرہ سے خرچ ہوئے لیکن تقریباًپچاس فیصد کے قریب لفٹ اسکیمیں ناکارہ پڑی ہیں۔انہوں نے بتایا کہ کہیں تیل نہیں تو کہیں ٹرانسفارمر خراب ہے، اگر مشینری ٹھیک ہے تو پھر محکمہ جل شکتی کی انجینئرنگ اور میکینکل ونگوں کے درمیان تال میل کا فقدان ہے جس سے لفٹ اسکیمیں چل نہیں رہیں۔اس سلسلہ میں مقامی معززین نے سب ڈویڑن مینڈھر میں پینے کے صاف پانی کی بحرانی صورتحال پرتشویش کا اظہار کیا ہے۔ انہوں نے لیفٹیننٹ گورنر انتظامیہ سے اپیل کی ہے کہ اِس سنگین مسئلہ کو فوری طور حل کرنے کے لئے متعلقہ حکام کو ہدایات جاری کی جائیں۔ انہوں نے کہاکہ مینڈھر، بالاکوٹ اور منکوٹ تحصیلوں میں پانی کی عدم دستیابی بڑا مسئلہ بن چکا ہے۔ دور دراز گاں سلانی، بلنوئی، کہنی، بگیوٹ، کلیاں، چھترال، پٹھانہ تیر، ڈھرانہ، سلواہ، گرسائی، نکہ ، نکہ منجہاڑی، دھارگلون، دیوتہ، بالاکوٹ، گلوتہ، کنڈی گلوتہ، بھاٹہ دھوڑیاں، چنڈیال، سنگیوٹ، کیری ، جگال، ڈیری ڈبسی، ڈھکی، بھاٹہ کس میں لوگوں کو اپنا زیاد ہ وقت دن میں پانی کا انتظام کرنے میں گذرجاتاہے۔ خواتین اور بچے بچیوں کو میلوں دور سے جاکر پانی لانا پڑتاہے، اس وجہ سے بچوں کی تعلیم بھی متاثر ہورہی ہے۔مقامی لوگوں نے کہا کہ نڑول کلیاں لفٹ اسکیم، کہنی لفٹ اسکیم، سلانی لفٹ اسکیم، کیری کنڈی گلوتہ لفٹ اسکیم، سوئیاں۔بالاکوٹ لفٹ اسکیم، بلنوئی لفٹ اسکیم، نکہ محلہ منہاساں لفٹ اسکیم اور اپر دھار گلون لفٹ اسکیمیں ناکارہ ہیں جس وجہ سے ہزاروں کی آبادی پانی سے محروم ہے۔مکینوںنے کہاکہ مرکزی سرکار کی طرف سے ’ہرگھر نل،ہرگھر جل‘نام سے کئی اسکیمیں بھی چلارہی ہے اور صد فیصد گھروں تک پانی پہنچانے پر کروڑوں روپے خرچ ہورہے ہیں مگر اِن کا مینڈھر میں زمینی سطح پر کوئی اثر دکھائی نہیں دے رہا۔انہوں نے کہاکہ محکمہ کا پورا انحصار ڈیلی ویجروں اور عارضی ملازمین پر چھوڑاگیا ہے جنرل لائن ملازمین اور اعلیٰ حکام اپنے فرائض سے انصاف نہیں کر رہے، جس سے عوام پریشان ہے۔مقامی لوگوں نے لیفٹیننٹ گورنر ، کمشنر سیکریٹری محکمہ جل شکتی سے اپیل کرتے ہوئے کہاکہ مینڈھر میں سبھی لفٹ اسکیموں کو فعال بنانے کے لئے متعلقہ حکام کو فوری ٹھوس اقدامات اْٹھانے کی ہدایات جاری کی جائیں۔