میلہ کھیر بھوانی کے موقعہ پر تولہ مولہ میں خصوصی پوجا پاٹ

گاندربل//وسطی ضلع گاندربل کے تولہ مولہ میں میلہ کھیر بھوانی کا سالانہ تہوار اقلیتی برادری نے روایتی عقیدت و احترام سے منایا گیا۔کورونا کی وجہ سے بہت کم تعداد میں کشمیری پنڈتوں نے جیشٹھ اشٹمی کے موقعہ پر پوجا پاٹ میں حصہ لیا۔اس موقعہ پر دن بھر شردھالوں نے روایتی اندازمیں صبح سے ہی خصوصی پوجا پاٹ میں حصہ لیا۔میلہ کھیر بھوانی جیشٹھ اشٹمی  کے سالانہ تہوار کے موقعہ پر منایا جاتا ہے۔ میلہ کھیر بھوانی میں کشمیری پنڈتوں کی خاصی تعداد شریک ہوتی ہے اور ہر سال نہ صرف وادی کے مختلف علاقوں میں رہائش پذیر بلکہ جموں میں قیام پذیر کشمیری پنڈت بھی کثیر تعداد میں آتے ہیں۔میلہ کھیر بھوانی میں کشمیری پنڈتوں کا بڑے پیمانے پر مقامی اکثریتی آبادی نے والہانہ استقبال کیا۔مسلمانوں نے کشمیری پنڈت بھائیوں کے لئے جگہ جگہ سٹال قائم کئے تھے، جن پر پوجا پاٹ کے لئے استعمال ہونے والی اشیاء دستیاب رکھی گئی تھیں۔گزشتہ سال میلہ کھیر بھوانی کوویڈ کی وجہ سے منسوخ کیا گیا تھا لیکن امسال محدود تعداد میں پوجا پاٹ کی اجازت دی گئی۔کشمیر عظمیٰ سے بات کرتے ہوئے کئی کشمیری پنڈتوں نے کہا کہ گاندربل کے لوگوں نے سالہا سال سے جس والہانہ محبت کا اظہار کرنا اپنا شیوہ بنا رکھا ہے آج بھی وہ اسی روش پر قائم ہیں۔انہوں نے کہا کہ میلہ کھیربھوانی مذہبی آہنگی ،رواداری ،بھائی چارہ، عقیدت اور محبت کا ایک واضح پیغام دیتا ہے کیونکہ کشمیری ہندو اور مسلمان بھائی چارے کی علامت بن جاتے ہیں۔کھیر بھوانی کا میلہ ٹکری کپوارہ،رائتھن بیروہ، مورون پلوامہ اور دیگر چند مقامات پر بھی منایا جاتا ہے۔ ایڈیشنل چیف سیکرٹری صحت و طبی تعلیم اَتل ڈولو ، آئی جی کشمیر کے وِجے کمار ، ڈپٹی کمشنر گاندربل کرتیکا جیوتسنا نے استھاپن کا دورہ کیا اور حاضری دی۔